عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم سے متعلق درخواست کی سماعت کا تحریری حکم نامہ

کراچی: جوڈیشل مجسٹریٹ شرقی کی عدالت میں رکنِ قومی اسمبلی عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم سے متعلق درخواست کی سماعت ہوئی، عدالت نے تحریری حکم نامہ جاری کردیا۔

تحریری حکم نامے کے مطابق ورثاء کا موقف ہے کہ عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم سے انکی قبر کی بے حرمتی ہوگی۔کوئی شک نہیں ہے کہ ورثاء عامر لیاقت کی قبر کے وارث ہیں۔

حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ جب موت مشکوک ہو اور جرم کا بھی خدشہ ہو تو انصاف کے نظام کو حرکت میں آنا چاہیے۔پس پردہ حقائق کو سامنے آنا چاہیے ۔

حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ پولیس سرجن کے مطابق لاش کے بیرونی موت کی اصل وجہ پتہ نہیں چلتی ہے ۔اس لیے واضح ہے کہ عامر لیاقت کی وجہ موت تاحال معلوم نہیں ہوسکی۔ عامر لیاقت کی موت کی وجہ پتہ نا چلنا سوال پیدا کرتی ہے کہ موت قدرتی ہوئی ہے یا نہیں۔

حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ عدالت اس نتیجے پر پہنچی ہے عامر لیاقت کا پوسٹ مارٹم ناگزیر ہے،تحریریتاکہ شکوک وشبہات کے بادل چھٹ سکیں۔

عدالت نے سیکریٹری صحت کو میڈیکل تشکیل دینے کی ہدایت کردی ،میڈیکل بورڈ پوسٹ مارٹم کی تاریخ کا تعین کرے گا ،میڈیکل بورڈ کی تشکیل سے متعلق عدالت کو بھی آگاہ کیا جائے ، عدالت نے ایس ایچ او بریگیڈ کو ہدایت جاری کی ہیں کہ میڈیکل بورڈ کی تشکیل سے متعلق آگاہ کیا جائے ۔

عدالت نے ایس ایچ او بریگیڈ کو تمام انتظامات کرنے کی بھی ہدایت کردی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More