آرٹیکل 63 اے پر عدالتی فیصلہ، حمزہ شہباز حکومت نےسرجوڑ لیے

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے آرٹیکل 63 اے سے متعلق صدارتی ریفرنس پر فیصلہ سنا دیا۔منحرف اراکین کا ووٹ کاسٹ نہ ہونے کے فیصلے پر حمزہ شہباز حکومت نےسرجوڑ لیے۔پنجاب اسمبلی میں 26 منحرف اراکین کا ووٹ مسترد ہونے کے بعد کی صورتحال کیا ہوگی۔

ملک کی سب سے بڑی عدالت نے منحرف اراکین کی قسمت کا فیصلہ سنا دیا۔ اپنے فیصلے میں سپریم کورٹ کا کہنا تھا کہ منحرف اراکین کو ووٹ شمار نہیں ہوسکتا۔ جس کے بعد پنجاب میں ایک اور بحران پیدا ہونے لگا۔ تحریک انصاف کے 26 منحرف اراکین کا ووٹ مسترد ہونے کے بعد حمزہ شہباز وزارت اعلی ٰکے منصب سے ہاتھ دھو بیٹھیں گے۔

سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد حمزہ شہباز اور ان کی جماعت نے الیکشن کمیشن کے فیصلے پر نظریں جما لیں۔اگر الیکشن کمیشن نے بھی منحرف اراکین کے ووٹ کو تسلیم نہ کرنے کا فیصلہ سنا دیا تو حمزہ شہباز سادہ اکثریت کھو دیں گے ۔

حمزہ شہباز عثمان بزدار کے مستعفی ہونے کے بعد تحریک انصاف اور ق لیگ کے مشترکہ امیدوار چوہدری پرویز الہی کے مقابلے میں197ووٹ لے کر وزیر اعلیٰ پنجاب منتخب ہوئے تھے جبکہ تحریک انصاف اور ق لیگ نے اس انتخاب کا بائیکاٹ کرتے ہوئے ایوان سے واک آوٹ کر دیا تھا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More