کرکٹر یاسر شاہ کے خلاف لڑکی کو ہراساں کرنے اور زیادتی میں معاونت پر مقدمہ درج

اسلام آباد: پاکستان کرکٹ ٹیم کے ٹیسٹ کرکٹر یاسر شاہ کےخلاف لڑکی کو ہراساں کرنے اور زیادتی میں معاونت کے الزام میں مقدمہ درج کرلیا گیا۔تھانہ شالیمار میں خاتون کی درخواست پر ایف آئی آر درج کرلی گئی جبکہ پولیس نے مزید تحقیقات شروع کردی۔

ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ یاسر شاہ کے دوست فرحان نے گن پوائنٹ پر زیادتی کی، ویڈیو بھی بنائی اور ہراساں کیا۔متاثرہ لڑکی نے الزام عائد کیا ہے کہ فرحان اور یاسر شاہ نے دھمکی دی کہ کسی کو بتایا تو ویڈیو وائرل کردیں گے اور جان سے بھی ماردیں گے۔

ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا کہ یاسر شاہ نےکہا وہ انٹرنیشنل کرکٹر ہے شکایت کی صورت میں مقدمے میں پھنسا دے گا۔متاثرہ لڑکی نے کہا کہ واٹس ایپ پر یاسر شاہ کو سارے معاملے کا بتایا تو اس نے مذاق اڑایا۔ایف آئی آر میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ یاسر شاہ نے سنگین نتائج کی دھمکیاں دیں اور کہا وہ بہت با اثر ہے، اعلیٰ افسران سے دوستی ہے۔

مقدمے کے متن میں کہا گیا ہے کہ پولیس کو اطلاع دی تو قومی کرکٹر نے فلیٹ اور 18 سال تک اخراجات اٹھانے کی پیش کش کی۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More