کل ایک بوگس، غیر آئینی اور متنازعہ الیکشن کروایا گیا، چودھری پرویزالٰہی

لاہور: سربراہ قاف لیگ چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ کل ایک بوگس، غیر آئینی اور متنازعہ الیکشن کروایا گیا۔ الیکشن کو گورنر پنجاب اورایڈووکیٹ جنرل پنجاب پہلےہی متنازعہ قرار دےچکےہیں۔ آئینی مسئلہ ہے، واضح صورتحال سامنے آنےتک اسکوتسلیم نہیں کرسکتے۔

چودھری پرویز الٰہی کی زیرصدارت ق لیگ اورپی ٹی آئی پارلیمانی پارٹی کامشترکہ اجلاس ہوا۔ اجلاس کے بعد سربراہ قاف لیگ چودھری پرویز الٰہی کا کہنا تھا کہ نون لیگ کی اوچھی حرکتوں نے ثابت کر دیا کہ انہوں نےابھی تک پرانےکام نہیں چھوڑے۔ ماضی میں عدالتوں پرحملہ کیا اب پنجاب اسمبلی پردھاوا بول دیا گیا۔ کل جو کچھ ہوا پنجاب کی پارلیمانی تاریخ میں ایسا کبھی پہلے نہیں ہوا۔ پولیس ایسےآئی جیسے ڈاکوئوں پرحملہ کرنے آئے ہیں۔

پرویز الٰہی نے کہا کہ یہ سب کچھ حمزہ شہباز کی سربراہی میں ہوا۔ان کا ٹارگٹ تھا پی ٹی آئی اورہمارے ایم پی ایز کو ڈرا کر ایوان سے باہر نکالا جائے۔

سربراہ قاف لیگ کا کہنا تھا کہ ڈپٹی سپیکر نے گیلری میں کھڑے ہوکر الیکشن کروایا۔ جس کی کوئی آئینی حیثیت نہیں۔ مہمانوں کی گیلری میں میگا فون پکڑ کر تو کوئی بھی الیکشن کرواسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اجنبیوں کی جگہ بیٹھ کر ایک اجنبی نے الیکشن کروایا۔ کیسا الیکشن ہےجس میں وزیراعلیٰ کے امیدوار کو زخمی کر دیا۔ جس گیلری میں ہمارے ارکان نےجانا تھا اس کوپولیس سے بلاک کردیا گیا۔

چودھری پرویز الٰہی کا کہنا تھا کہ جس طرح جعلی الیکشن کروایا اسی طرح جعلی گورنر ڈھونڈ کر جعلی حلف بھی لے لیں۔ ہم نے آئینی ماہرین کا اجلاس طلب کر لیا ہے۔ اس غیر آئینی الیکشن کو چیلنج کرنے کیلئے لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

پرویز الٰہی نے کہا کہ ہم نےکل کی درخواست دی ہے ابھی تک مقدمہ درج نہیں کیا گیا۔ ان کی درخواست پر کل رات ہی مقدمہ درج کر لیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ ایوان میں ڈٹ کر ان غنڈوں کا مقابلہ کرنے والے اراکین کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More