سری لنکن شہری کا قتل، 6 ملزمان کو سزائے موت،7 کو عمر قید

لاہور:انسداد دہشتگردی عدالت نے سری لنکن شہری کے قتل کیس کا فیصلہ سنادیا۔قتل میں ملوث 6 مجرمان کو سزائے موت ،سات کو عمر قید اور 75 ملزمان کو 2،2 سال کی قید کی سزا سنائی ۔انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت کی جج نتاشہ سلیم نے فیصلہ سنایا۔

انسداد دہشتگردی عدالت نے سری لنکن شہری کے قتل کیس کا فیصلہ سنادیا۔ انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے قتل میں ملوث 6 مجرمان کو سزائے موت،7 کو عمر قید 76مجرمان کو 2، 2 سال قید کی سزا سنائی۔

عدات میں 14مارچ2022کومدعی اور6چشم دیدگواہوں کےبیانات قلمبند کئے گئے۔15مارچ 8 چشم دید گواہوں سمیت11 گواہوں کے بیانات قلمبندہوئے۔16 مارچ کو6 گواہوں،17مارچ کو9چشم دید گواہوں کے بیان ریکارڈ ہوئےجبکہ 18 مارچ کو2 اور19 کو6 چشم دید گواہوں کے بیانات قلمبند کئے گئے ۔

اسپیشل پراسیکیوٹر عبدالرؤف وٹو سمیت 5 پراسیکیوٹرمقدمے پیش ہوئے۔بالغ اور نابالغ ملزمان کےخلاف علیحدہ علیحدہ 2چالان جمع کروا رکھے ہیں۔پراسیکیوشن کی جانب سے 46 گواہان کو چالان کا حصہ بنایا گیا ہے۔

واقعہ کی ویڈیوز اور ڈیجیٹل شواہد کو چالان کا حصہ بنایا گیا ہے۔10سی سی ٹی وی کیمروں کی فوٹیج بھی چالان کا حصہ تھی۔ڈی این اے شواہد، چشم دید،گواہان اور فرانزک شواہد کو بھی چالان کا حصہ بنایا گیا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More