اکاؤنٹ میں 24 سال کی تنخواہ منتقل، ملازم استعفیٰ دیکر غائب

واشنگٹن: امریکا کے جنوبی ملک چلی میں نجی کمپنی نے غلطی سے ملازم کے اکاونٹ میں 24 سال کی تنخواہ ٹرانسفر کر دی، جس کے بعد ملازم نوکری سے استعفی دے کر غائب ہو گیا۔

کولڈ کٹس بنانے والی کمپنی کنسورشیو انڈسٹریل ڈی الیمینٹوز نے گزشتہ ماہ غلطی سے ملازم کے اکاؤنٹ میں ایک ماہ کی بجائے 286 ماہ کی تنخواہ یعنی 1 لاکھ 80 ہزار امریکی ڈالرز منتقل کر دی، جو پاکستانی روپے میں 3 کروڑ 70 لاکھ 41 ہزار سے زائد بنتی ہے۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ انہوں ملازم کو اس غلطی کے بارے میں آگاہ کیا اور اس سے رقم واپس کرنے کا مطالبہ کیا، جس کا اس نے وعدہ بھی کیا لیکن پھراستعفی دے کر فرار ہو گیا۔

تاہم اس غلطی کے بعد کمپنی کی ہیومن ریسورسز ڈپارٹمنٹ کی ڈپٹی مینجر کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ جبکہ کمپنی کی جانب سے اپنی رقم واپس لینے کیلئے قانونی کارروائی کرنے کا فیصلہ بھی کر گیا ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More