کورونا کی نئی قسم، نیوزی لینڈ میں بھی سفری پابندیاں عائد

ویلنگٹن: کورونا وائرس کی نئی قسم کے باعث نیوزی لینڈ نے بھی سفری پابندیاں عائد کر دیں۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق نیوزی لینڈ کی جانب سے سفری پابندیوں کے بعد 9 افریقی ممالک سے صرف نیوزی لینڈ کے شہری ہی واپس آ سکیں گے۔ بیرون ملک سے واپس آنے والے نیوزی لینڈ کے شہریوں کو ملک میں داخلے سے پہلے 14 دن کے لیے قرنطینہ ہونا ہو گا۔ اس سے قبل کورونا کی نئی قسم کے پھیلنے کے خطرے کے پیش نظرآسٹریلیا نے 9 افریقی ممالک پر سفری پابندیاں عائد کر دی ہیں۔

جنوبی افریقہ، نمیبیا، زمبابوے، بوٹسوانا، لیسوتھو، ملاوی اور موزمبیق پر پابندیاں عائد کی گئیں ہیں۔ حکام کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سے واپس آنے والے آسٹریلوی شہریوں کو 14 دن کے قرنطینہ کے بعد ملک میں داخلے کی اجازت ہو گی۔ جرمنی، اٹلی، اسرائیل اور سنگاپور نے بھی جنوبی افریقی ممالک کے شہریوں پر سفری پابندیاں عائد کی ہیں اور انھیں ریڈ لسٹ میں ڈال دیا ہے۔

اسے سے قبل برطانیہ کی جانب سے چھ افریقی ممالک پر نئی سفری پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔ ان میں جنوبی افریقہ، نمیبیا، زمبابوے، بوٹسوانا، لیسوتھو اور اسواتینی شامل ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More