عمران خان نے حکومت کو 6 روز کی ڈیڈ لائن دے دی

اسلام آباد : چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے حکومت کو 6 روز کی ڈیڈ لائن دے دی، کہتے ہیں اسمبلیاں تحلیل کی جائیں، حکومت 6 دن میں الیکشن کا اعلان کرے ورنہ ملک بھر سے کارکنوں کو لیکر دوبارہ اسلام آباد آؤں گا۔

سابق وزیراعظم عمران خان نےجناح ایونیو پرکارکنوں سے خطاب میں کہا کہ میری قوم آزادی کےلیےہرقربانی دینے کے لیے تیارہے، ہماری آزادی کی تحریک کوفیل کرنےکےلیےہرقسم کی کوشش کی گئی، پاکستان کے ہرطبقہ فکر کےلوگ متحد ہیں۔ امریکی سازش کےتحت امپورٹڈحکومت کومسلط کیاگیا قوم اس امپورٹڈحکومت کوکسی صورت قبول نہیں کرےگی۔

 انہوں نے کہا کہ آدھی سے زیادہ کابینہ ضمانت پر ہے، امپورٹڈ وزیراعظم اوراس کےبیٹے کوسزا ہونی تھی، اس سے زیادہ قوم کی کیاتوہین ہوسکتی ہے کہ چوروں کواقتدارسونپ دیاگیا۔انہوں نے ازخودنوٹس لینےپرسپریم کورٹ کاشکریہ اداکیا۔عمران خان نے سوال اٹھایا کہ کیا پرامن احتجاج ہماراحق نہیں ہے؟ کیاہم نےفضل الرحمان اوربلاول بھٹو کےلانگ مارچ کوروکا؟ ہم نے کبھی ان کے جلسوں میں رکاوٹ پیدا کرنےکی کوشش کی؟ میرجعفرمیرصادق امریکی سازش کاحصہ تھے۔

عمران خان نے کہا کہ جس طرح سازش سے ہمیں ہٹایا گیا،عوام میں شدید غصہ ہے۔ ہماری آزادی کی تحریک میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں،قوم کی خواتین کوسلام پیش کرتاہوں، ہمارےکارکنوں پر لاٹھی چارج اور شیلنگ کی گئی، اعلیٰ عدلیہ سےاپنےپاکستانیوں سےانصاف چاہتاہوں، اگر یہ جسٹس (ر) ناصرہ اقبال کے گھر میں گھس سکتے ہیں توعام آدمی کا کیا حال ہو گا، امپورٹڈ حکومت نےچن چن کرکرپٹ افسرو ں کوتعینات کیا، اعلیٰ عدلیہ سے اپیل کرتاہوں کہ ایف آئی اےکوشریف مافیا سےبچائیں۔

چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ فیصلہ توکیاتھا کہ الیکشن کی تاریخ تک یہاں بیٹھوں گا، 24گھنٹےمیں جوحالات دیکھے یہ ملک کوانتشارکی طرف لےجارہےہیں، حکومت عوام اور پولیس میں نفرت پیدا کرنےکی کوشش کررہی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More