وزیراعظم کا سرکاری اراضی واپس لینے کیلئے ٹھوس پلان تیار کرنے کا حکم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے قبضہ مافیا سے سرکاری اراضی واپس لینے کے لیے ٹھوس پلان ایک ہفتے میں تیارکرنے کا حکم دے دیا ہے۔

عمران خان کی زیرصدارت اجلاس میں لاکھوں ایکٹر اراضی پر قبضہ ختم کرانے پر مشاورت کی گئی، وزیراعظم کا کہنا ہے کہ خلاف ورزی کے مرتکب کسی فرد سے رعایت نہ برتی جائے۔ وفاقی اور صوبائی محکمے مل کر سرکاری اراضی سے قبضے ختم کرائیں گے۔

وزیر اعظم نے معاون خصوصی ملک امین اسلم کو پلان ترتیب دینے کا ہدف دیتے ہوئے حکم دی کہ سرکاری اراضی واگزارکرانے کے لئے ایک ہفتے میں سفارشات مرتب کی جائیں۔ پہلے کیڈیسٹرل میپنگ کی مکمل کی گئی، اب محکمے اپنی ذمہ داری پوری کریں گے۔

اجلاس میں پیش کی گئی رپورٹ میں بتایا گیا کہ قبضہ شدہ سرکاری اراضی کی مالیت 5 ہزار 595 ارب روپے بنتی ہے۔ جنگلات کی قبضہ شدہ ساڑھے سات لاکھ ایکٹر رقبے کی مالیت 1 ہزار 870 ارب روپے تک ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More