میگا کرپشن مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا نیب کی اولین ترجیح ہے

اسلام آباد: چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کہتے ہیں کہ میگا کرپشن مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا نیب کی اولین ترجح ہے، ملک کی ترقی اور معاشی خوشحالی میں بزنس کمیونٹی کا کردار انتہائی اہم ہے۔

قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس رجاوید اقبال نےاپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ بزنس کمیونٹی کا ملک کی ترقی اور معاشی خوشحالی میں اہم کردار ہے جس کو نیب انتہائی اہمیت دیتا ہے ، نیب نے انکم ٹیکس، سیلز ٹیکس اور انڈر انوائسز کے کیسز قانون کے مطابق ایف بی آر کو بھجوا دئیے تھے۔

چیئرمین نیب کےمطابق میگا کرپشن مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا اور ملک سے بدعنوانی کاخاتمہ نیب کی اولین ترجیح ہے جس کیلئے بھرپور کوششیں کی جارہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وائٹ کالر کرائمز کی انویسٹیگیشن بڑا چیلنج ہے، نیب نے تمام علاقائی بیورو سے جعلی ہاؤسنگ سوسا ئٹیوں کو آپرٹیو سوسائیٹوں پر اب تک کی پیش رفت رپورٹ طلب کرلی ہے تاکہ متاثرین کی شکایات کا قانون کے مطابق جلد از جلد ازالہ کیا جاسکے۔

چیئرمین نیب نے بتایا کہ مقدمات کو نمٹانے کیلئے دس ماہ کا وقت مقرر کیا ہے جس کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں، اس کے علاوہ نیب نے مقدمات کی جدید خطوط پر تحقیقات کیلئےفرانزک سائنس لیبارٹری قائم کی ہے جس کا مقصد انویسٹیگیشن کے معیار کو مزید بہتر بنانا ہے، گزشتہ 4 سالوں میں نیب کے 1194 ملزمان کو معزز احتساب عدالتوں نے قانون کے نہ صرف سزا سنائی بلکہ اربوں روپے جرمانہ ادا کرنے کی بھی سزا سنائی۔

چیئرمین نیب کا کہنا تھا کہ نیب احتساب سب کیلئے کی پالیسی پر بھرپور یقین رکھتا ہے، نیب ایک انسان دوست ادارہ ہے جو ہر شخص کی عزت نفس پر یقین رکھتا ہے کیونکہ نیب کا تعلق کسی سیاسی جماعت، گروپ اور فرد سے نہیں بلکہ ریاست پاکستان سے ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More