ایکس رے سے چند منٹوں میں کورونا کا پتہ لگانا ممکن

ویب ڈیسک: طویل انتظار ختم، اب ایکس رے کے زریعے کورونا ٹیسٹ کا پتہ لگانا ممکن ہو گیا، ماہرین نے پی سی آر ٹیسٹ کے بجائے ایکس رے سے چند منٹوں میں 98 فیصد درست رزلٹ دینے کا دعوی کردیا ہے۔

نئی ٹیکنالوجی میں وائرس کا پتا لگانے کے لیے مصنوعی ذہانت کا استعمال کیا گیا ہے، ماہرین نے امید ظاہر کی ہے کہ یہ ٹیکنالوجی فرنٹ لائن پر طبی عملے کے لیے مددگار ثابت ہو گی۔ انفیکشن کے ابتدائی مراحل کے دوران ایکس رے میں کورونا کی علامات نظر نہیں ہوتی ہیں، اس لیے یہ ٹیکنالوجی پی سی آر ٹیسٹوں کی مکمل طور پر جگہ نہیں لے سکتی۔

تاہم، یہ پھر بھی وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے خاص طور پر جب پی سی آر ٹیسٹ آسانی سے دستیاب نہ ہوں۔ ماہرین کا ماننا ہے کہ وائرس کے سنگین معاملات کی تشخیص کرتے وقت یہ اہم اور ممکنہ طور پر جان بچانے والا ثابت ہو سکتا ہے، اس بات کا تعین کرنے میں مدد کر سکتا ہے کہ مریض کو کس علاج کی ضرورت ہو سکتی ہے۔

ریسرچ، انوویشن اور انگیجمنٹ کے وائس پرنسپل پروفیسر میلان کا کہنا تھا کہ ممکنہ طور پر گیم بدلنے والی تحقیق ہو سکتی ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More