ممنوعہ فنڈنگ کیس، اکبر ایس بابر کا فریق بننے کا فیصلہ

اسلام آباد: پاکستان تریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سابق رہنما اکبر ایس بابر نے ممنوعہ فنڈنگ کیس میں فریق بننے کا فیصلہ کر لیا۔

ممنوعہ فنڈنگ کیس میں پی ٹی آئی کے سابق رہنما اکبر ایس بابر نے اپیل میں فریق بننے کے لیے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر کر دی۔ ہائی کورٹ کا لارجر بینچ پی ٹی آئی کی اپیل پر کل سماعت کرے گا۔

اکبر ایس بابر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے جعلی بیان حلفی دیئے اور وہ ثابت ہو گیا۔ پی ٹی آئی نے 8 سالوں سے جو حقائق چھپائے انہیں ہم نے بے نقاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ پاکستان کا سب سے بڑا کیس ہے اور میں نے جو الزامات لگائے وہ ثابت ہوچکے ہیں۔ عمران خان فنانشل ٹائمز کے خلاف احتجاج کیوں نہیں کرتے۔ وہ فنانشل ٹائمز کے خلاف ایک مذمتی بیان نہیں دے سکتے۔

اکبر ایس بابر نے کہا کہ تحقیقات ہو رہی ہیں، نتائج آئیں گے تو حیرت انگیز انکشافات ہوں گے۔ کہا تھا غیر قانونی فارن فنڈنگ کا ایک ٹپ آف آئیس برگ ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More