ایک بٹ کوائن کی قیمت ایک کروڑ روپے سے زائد

کرپٹو کرنسی بٹ کوائن کی قیمت ایک بار پھر بلند ترین سطح پر پہنچ گئی۔

بٹ کوائن کی قیمت میں جمعے کے روز اضافہ دیکھا گیا، جس کے بعد قیمت 6 ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے۔ بٹ کوائن کی قیمت میں اضافے کی وجہ امریکی ریگولیٹرز کی جانب سے اسے ایکسچینج ٹریڈڈ فنڈ کے لیے مستقبل میں استعمال کی منظوری کو بتایا جارہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق کرپٹو کرنسی کی قیمت میں تقریبا 4.6 فیصد اضافہ ہوا، جس کے بعد ایک بٹ کوائن کی قیمت 60 ہزار ڈالرز تک پہنچ گئی جو پاکستانی کرنسی کے حساب سے ایک کروڑ دو لاکھ تیس ہزار روپے کے قریب بنتی ہے۔ یاد رہے کہ اس سے قبل اپریل میں بٹ کوائن کی قیمت ایک لاکھ امریکی ڈالرز تک پہنچ گئی تھی۔

بلومبرگ کی شائع کردہ رپورٹ‌ کے مطابق امریکی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن (ایس ای سی) اگلے ہفتے پہلے امریکی بٹ کوائن فیوچر ای ٹی ایف کو ٹریڈنگ کی اجازت دینے کے لیے تیار ہے، جس کی وجہ سے سرمایہ کاروں کا اعتماد بحال ہوا اور انہوں نے کرنسی کی خرید و فروخت شروع کی۔

کرپٹو کرنسی ایکسچینج کے محکمہ حکمت عملی کے سربراہ نے بتایا کہ بٹ کوائن کا 59 ہزار ڈالرز سے اوپر جانا صوابدیدی نہیں تھا بلکہ سرمایہ کاروں کی وجہ سے ہی ممکن ہوا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More