عمران خان نے پاکستان کی ڈوبتی معیشت کو بچایا، وزیرخزانہ

واشنگٹن: وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا ہے کہ عمران خان نے پاکستان کی ڈوبتی معیشت کو بچایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اصلاحاتی ایجنڈے پر کام کررہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ افغان جنگ سے پاکستان کی معیشت پر اثرات مرتب ہوئے ہیں۔

انہوں نے یہ بات عالمی بینک کے نائب صدر سے ملاقات کے موقع پر کہی ہے۔ وزیرخزانہ شوکت ترین، سیکریٹری خزانہ اور گورنر اسٹیٹ بینک سمیت دیگر متعلقہ حکام کے ہمراہ امریکہ کے دورے پر پہنچے ہیں۔ طے شدہ شیڈول کے مطابق وزیر خزانہ پاکستان امریکہ بزنس کونسل کی دعوت پر راؤنڈ ٹیبل کانفرنس میں شرکت کریں گے۔

ان کی دورہ امریکہ میں اپنے ترک ہم منصب سے بھی ملاقات ہو گی۔ شوکت ترین امریکی انسٹیٹیوٹ آف پیس میں پاکستان کی معیشت سے متعلق گفتگو کریں گے اور ان کی آئی ایم ایف کے حکام سے بھی ملاقات ہو گی۔ وزیر خزانہ شوکت ترین نے عالمی بینک کے نائب صدر سے بات چیت میں کہا کہ پاکستان کی آبادی 60 فیصد نوجوانوں پر مشتمل ہے جنہیں روزگار کی ضرورت ہے۔

انہوں نے بات چیت کے دوران دعویٰ کیا کہ پاکستان کی معیشت 5 فیصد کی شرح سے ترقی کرے گی۔ انہوں نے بتایا کہ ملک میں عوام کو سستے گھر اور صحت کارڈز بھی دے رہے ہیں۔ وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے عالمی بینک کے نائب صدر کو بتایا کہ پسماندہ طبقات کے تحفظات کو یقینی بنایا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان اور امریکہ کے تعلقات پرانے ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More