سانحہ سیالکوٹ: ملزمان کا ٹرائل جیل میں کروانے کا فیصلہ

سیالکوٹ: سانحہ سیالکوٹ کے ملزمان کا ٹرائل جیل میں کروانے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

ذرائع کے مطابق سیالکوٹ میں تشدد سے ہلاک کیے گئے سری لنکن شہری کے قتل کا مقدمہ جیل میں چلایا جائے گا۔ امن وامان کی صورتحال کے باعث ٹرائل جیل کروانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ پراسیکیوشن اور پنجاب حکومت کے اجلاس میں ملزمان کے جیل ٹرائل کا فیصلہ کیا گیا۔ جیل انتظامیہ کو انتظامات مکمل کرنے کی ہدایات جاری کر دی گئیں ہیں۔

دوسری جانب پولیس حکام کوجلد از جلد چالان مکمل کرکے عدالت میں جمع کروانے کی ہدایت بھی کی گئی ہے۔ پولیس کے مطابق اب تک گرفتار کیے گئے ملزمان میں 34 مرکزی ملزم شامل ہیں۔ملزمان کو سی سی ٹی وی فوٹیج اور موبائل کالز ڈیٹا کی مدد سے گرفتار کیا گیا ہے۔

وزیر اعظم عمران خان نے سیالکوٹ واقعے میں ملوث افراد کو سخت اور فوری سزا دلوانے کا حکم دیا ہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More