گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کا پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا خدشہ

اسلام آباد: گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر نے پیٹرولیم مصنوعات اور بجلی کی قیمتیں بڑھنے کا عندیہ دیدیا اور کہا کہ آئی ایم ایف بجلی اور پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھانے پر زور دے رہا تھا جس پر عمل نہ ہوسکا ، اب جلد ہی ہو جائے گا۔

انگریزی جریدے بلوم برگ کو انٹرویو میں گورنر اسٹیٹ بینک نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ایندھن اور بجلی کی قیمتیں بڑھانے کے مطالبےپر عمل کرنا مشکل رہا ، سیاسی حالات در پیش ہوں تو مشکل فیصلے لینے میں تاخیر رہتی ہے ، مجھے امید ہے کہ جلد یہ تاخیر ختم ہو گی اور ہم اچھی خبر سنائیں گے۔

رضا باقر نے کہا کہ روپے اور سٹاک مارکیٹ میں واقعی اچھے اشاریے ہیں ، ضروری ہے کہ معاشی پالیسی مرتب کرنے والے ادارے مالیاتی استحکام کے مقصد کو لے کر چلیں ، اسٹیٹ بینک نے اسی لئے شرح سود بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے، شرح سود میں اضافے کے باوجودمعیشت کی نمو 4 فیصد رہنے کے اندازے ہیں۔

گورنر اسٹیٹ بینک نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ساتھ وزارت خزانہ اور سٹیٹ بینک کے رابطے ہیں، آئی ایم ایف کے ایندھن اور بجلی کی قیمتیں بڑھانے پر عمل کرنا مشکل رہا ، سیاسی حالات در پیش ہوں تو مشکل فیصلے لینے میں تاخیر ہوتی ہے ، مجھے امید ہے کہ جلد یہ تاخیر ختم ہو گی اور ہم اچھی خبر سنائیں گے ، آئی ایم ایف کے ساتھ اگلی ٹرانچ مکمل ہونے کی خبر سنائیں گے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More