برفباری اور طوفان سیاحوں کی اموات کا سبب بنے

لاہور: پنجاب حکومت کے ترجمان حسان خاور نے اعتراف کیا ہے کہ برفباری کی پیشگی اطلاع تھی ، برفباری اورطوفان سیاحوں کی اموات کا سبب بنے، ان کاکہناتھاکہ حادثہ کسی بھی دورحکومت میں ہو ذمہ داری حکومت پر عائد ہوتی ہے۔

پریس کانفرنس سے خطاب میں حسان خاور نے کہا کہ 4 گاڑیوں میں سوارافراد کی اموات ہوئیں، مری میں صورتحال افسوسناک ہے، برفباری کی وجہ سے سیاحوں کی بڑی تعداد کا مری جانے کاامکان تھا، باڑیاں روڈ پر 5 فٹ سے زائد برف کے بعد اموات ہوئیں۔

انہوں نے کہا کہ مری اورمضافات کوآفت زدہ علاقہ قرار دے دیا گیا ہے،پنجاب حکومت کے تمام متعلقہ محکمے مری میں پھنسے سیاحوں کونکالنے کے لیے اقدامات کررہے ہیں، فوج اور رینجرز کی خدمات بھی حاصل کرلی گئی ہیں، خوراک اور پٹرول لیکرجانے والی گاڑیوں کو جانے کی اجازت دی جارہی ہے۔

پنجاب حکومت کے ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ مری میں پھنسے سیاحوں نے اگر ایمرجنسی میں ریسکیو1122 سے رابطہ کیا اورفوری رسپانس نہیں دیا گیا تواس کی بھی تحقیقات کی جائیں گی، اب تک ایسی کوئی اطلاعات نہیں کہ ریسکیو کو ایمرجنسی کال کی گئی ہواور فوری رسپانس نہ دیا گیا، سیاحوں سے گزارش ہے کہ آئندہ چند روز تک مری کی طرف نہ جائیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More