یوم یکجہتی کشمیر: صدر مملکت اور وزیراعظم کا خصوصی پیغام

اسلام آباد: مقبوضہ کشمیر کے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے آج پاکستان سمیت دنیا بھر میں یوم یکجہتی کشمیر منایا جا رہا ہے۔ صدر مملکت عارف علوی کا کہنا ہے کہ ہم کشمیر میں مظالم پر خاموش نہیں بیٹھیں گے ،نہ ہی پیچھے ہٹیں گے ۔

یوم یکجہتی کشمیر پر وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں یکجہتی کشمیر ریلی نکالی گئی۔ ریلی میں صدر مملکت عارف علوی،اسپیکر قومی اسمبلی اور چیئرمین سینیٹ شریک ہیں۔ وفاقی وزرا ، ترجمان دفتر خارجہ اور دیگر حکام نے بھی شرکت کی۔ ریلی میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کےلیے ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی گئی۔ شرکا نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے بینرز اور پلے کارڈز بھی اٹھا رکھے تھے۔

صدر مملکت عارف علوی نے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں ظلم و بربریت کاسلسلہ جار ی ہے۔مقبوضہ کشمیر میں بلیک آوٹ ہے ،وہاں کشمیریو ں کی آواز دبائی جارہی ہے۔ بھار ت نے مقبوضہ کشمیر میں غیر کشمیری آبادکاری کی اجازت دی۔ بھارتی فورسز کشمیریوں کو گولیوں سے نشانہ بناتی ہیں۔ انہوں نے کہا ہے کہ ہم دنیا کے ہر فورم پر بھارتی مظالم کے خلاف آواز اٹھاتے رہیں گے۔بھارت کو خبردار کررہاہوں پاکستان ہاتھ پر ہاتھ رکھ کر نہیں بیٹھ سکتا۔ ہم کشمیر میں مظالم پر خاموش نہیں بیٹھیں گے ،نہ ہی پیچھے ہٹیں گے۔

صدر عارف علوی نے کہا ہے کہ عالمی برادری سے اپیل کرتے ہیں وہ بھارتی مظالم کانوٹس لے۔بھارت اپنے ہی ملک میں اقلیتوں کے ساتھ جوکررہاہے دنیا اس کی بھی گواہ ہے۔اپنی ہی لگی آگ سے بھارت میں چنگاریاں اٹھتی ہیں تو اس کا الزا م پاکستان پر لگے گا۔

دوسری جانب یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر وزیراعظم عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ مودی کی فسطائی پالیسیاں کشمیر کی مزاحمت کی روح کچلنے میں ناکام رہی ہیں، وقت آگیا ہے دنیا بھارتی مظالم ، انسانی حقوق کی سنگین پامالیوں کا نوٹس لے، کشمیر میں غیرجانبدارانہ استصوابِ رائے کا اہتمام عالمی برادری کے ذمہ ہے، اقوامِ عالم مقبوضہ جموں و کشمیر کے لوگوں کی حالتِ زار کونظرانداز نہ کریں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More