پنجاب میں ڈینگی مچھر دم توڑنے لگا

لاہور: پنجاب میں ڈینگی مچھر دم توڑنے لگا۔ 24 گھنٹوں میں ڈینگی کے 68 کنفرم کیسز سامنے آئے ہیں جبکہ اموات کی شرح صفر ہوگئی ہے۔

موسم تبدیل ہوتے ہی پنجاب میں ڈینگی مچھر اپنی موت آپ مرنے لگا۔ محکمہ صحت کے مطابق 24 گھنٹوں کے دوران صوبہ بھر سے ڈینگی کے 68 مریض رپورٹ ہوئے ہیں۔ سب سے زیادہ لاہور سے 48 افراد زہریلے مچھر کے کاٹنے سے اسپتالوں میں پہنچے۔ اسی طرح گوجرانولہ سے ڈینگی کے 4، خانیوال اور راولپنڈی سے 3 تین جبکہ چنیوٹ سے 2 مریض رپورٹ ہوئے۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق رواں سال پنجاب بھر سے اب تک ڈینگی کے کیسز کی تعداد 25,227 ہو چکی ہے جبکہ ابھی بھی سرکاری اسپتالوں میں ڈینگی کے 683 مریض زیر اعلاج ہیں۔ سیکریٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر ڈاکٹر جاوید قاضی کے مطابق لاہور کے اسپتالوں میں ڈینگی کے مریضوں کیلئے کل 2583 بیڈز مختص کیے گئے ہیں جن میں سے سرکاری اسپتالوں میں 1424 بیڈز خالی ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More