لندن میں نوازشریف پر حملہ کی کوشش کی گئی ہے، شہباز شریف کا دعویٰ

پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر شہبازشریف نے کہا ہے کہ لندن میں دفتر کے باہر نون لیگ کے قائد نوازشریف پر نوجوان کے حملے کی کوشش باعث تشویش اور لائق مذمت ہے۔ اللہ کا شکر ہے کہ حملے میں محمد نواز شریف محفوظ رہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ ہماری شرافت کو کمزوری نہ سمجھیں۔ اس سے پہلے بھی سیاسی نفرت میں لوگوں کو ورغلایا گیا۔ گھروں پر حملے کیے گئے کہا کہ جو موبائل نوازشریف کو طرف پھینکا گیا۔ وہ ان کے گارڈ کو لگا جس سے وہ زخمی ہوا۔

شہباز شریف نے کہا کہ پی ٹی آئی انتہاء پسند جماعت بن چکی ہے۔ جس کی پہچان تشدد، گالی اور حملے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ افسوسناک رویہ مہذب جمہوری اقدار، اسلامی تعلیمات اور معاشرتی روایات کے منافی ہے۔

صدر مسلم لیگ نون نے کہا ماہ رمضان کے آغاز پر یہ شیطانی رویہ دین مبین کی روشن تعلیم کے منافی ہے۔ ہم دیکھ چکے ہیں۔ کہا کہ عمران نیازی نے اپنے ہی ارکان قومی اسمبلی کے گھروں پر پتھراؤ اور حملہ کرایا۔ اس شکست خوردہ ذہنیت سے برآمد ہونے والا انتشار معاشرے کے لیے زہر قاتل ہے۔ اسے روکنا ہوگا۔

شہباز شریف نے اپنے پیغام مں کہا کہ ہمارے حوصلے ان کم ظرف رویوں سے پست نہیں ہوں گے۔ ہماری آئینی وجمہوری جدوجہد کامیاب ہوگی۔ ان شاءاللہ کل کا سورج ملک سے بدتمیزی، بدتہذیبی، جھوٹ، وعدہ خلافی، یوٹرن، کرپشن اور عدم برداشت کے اندھیروں کو مٹانے کے لئے طلوع ہوگا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More