دنیا نیوز ٹکر

روسی صدر نے امریکی انتخابات میں مداخلت کا الزام مسترد کردیا

ماسکو (14 دسمبر 2017) روسی صدر ولادیمر پیوٹن کی سالانہ پریس کانفرنس جاری ہے۔ پیوٹن امریکی انتخابات میں مداخلت کو بے بنیاد الزام قرار دے دیا۔ پیوٹن نے شمالی کوریا کو جوہری ملک تسلیم نہ کرنے اور ڈوپنگ ٹیسٹ میں کھلاڑیوں کا مقدمہ عدالتوں میں دفاع کرنے کا اعلان کردیا۔

روسی صدر ولادیمر پیوٹن نے سالانہ پریس کانفرنس میں سوال و جواب کے سیشن میں مختلف موضوعات پر بات چیت کی۔ امریکی انتخابات میں مداخلت کے سوال کے جواب میں کہا کہ مداخلت کا الزام ٹرمپ مخالفین کی طرف سے من گھڑت کہانی ہے۔

امریکا اور روس تعلقات پر پیوٹن کا کہنا تھا کہ امریکا اور روس کو دہشت گردی کا سامنا ہے اور کچھ پابندیوں کے سبب تعلقات میں بہتری نہیں آسکی۔ انہوں نے کہا کہ وقت کے ساتھ روس اور امریکا کے تعلقات معمول پر آجائیں گے۔

شمالی کوریا کے حوالے سے روسی صدر کا کہنا تھا کہ شمالی کوریا میں جو ہو رہا ہے وہ ردعمل ہے۔، شمالی کوریا پر حملے کے نتائج خطرناک ہوں گے۔ ڈوپنگ ٹیسٹ میں روسی کھلاڑیوں سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ روس عدالتوں میں کھلاڑیوں کا دفاع کرے گا۔

یہ بھی پڑھیئے

امریکہ: نیویارک میں بس ٹرمینل پر دھماکہ

سوچی: وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی روسی ہم منصب سے ملاقات

Related posts

حکومت نے آج عدالت میں تاریخ کا سب سے بڑا یوٹرن لیا، عمران خان

Khurram Adeel

یوم آزادی اور اظہار یکجہتی کشمیر پر چیئرمین سینٹ، قومی اسمبلی و دیگر کے پیغامات

nehal qavi

سپریم کورٹ میں شہباز شریف ضمانت کیس کی سماعت

shakir shaikh

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More