خیبر پختونخوا میں جنگلات کو جان بوجھ کر آگ لگائے جانے کا انکشاف

پشاور: خیبر پختونخوا میں جنگلات کو جان بوجھ کر آگ لگائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

گزشتہ چند دن میں خیبر پختونخوا میں جنگلات میں آگ لگنے کے متعدد واقعات سامنے آئے ہیں ۔ جن میں مالی اور جانی نقصان کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ آتشزدگی کے واقعات کے بعد سے آگ لگنے کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات جاری ہیں جن میں جنگلات کو جان بوجھ کر آگ لگائے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ خیبر پختون خوا پولیس کے مطابق آگ لگانے میں ملوث 12 افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

محکمہ جنگلات کا کہنا ہے ملزمان کی جانب سے ذاتی ملکیتی جنگلات کو حکومتی امدادکی غرض سے آگ لگائی گئی۔ گرفتار افراد میں 4 ایبٹ آباد ،4 سوات،2 دیر لوئراور 2 کا تعلق خیبر سے ہے۔گرفتار افراد کے خلاف محکمہ جنگلات ایکٹ کے تحت کارروائی کی جائے گی۔

ترجمان محکمہ جنگلات کا کہنا ہے کہ سرکار کے زیر انتظام جنگلات میں صرف 3 مقامات پر آگ لگنے کے واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More