تازہ ترین
اشتعال انگیز تقریر:سپریم کورٹ نے نہال ہاشمی پر فرد جرم عائد کردی

اشتعال انگیز تقریر:سپریم کورٹ نے نہال ہاشمی پر فرد جرم عائد کردی

 

کراچی: (10جولائی،2017)سپریم کورٹ نےاشتعال اوردھمکی آمیز تقریرپر مسلم لیگ ن کے سینیٹر نہال ہاشمی کیخلاف فرد جرم عائد کردی ہے۔ جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئے ہیں کہ آپ کو جیل نہیں بھیج رہے صرف کارروائی کا آغاز کررہے ہیں۔

مسلم لیگ ن کے سینیٹر نہال ہاشمی کی اشتعال اور دھمکی آمیز تقریر سے متعلق کیس کی سماعت جسٹس اعجاز افضل کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کی۔بینچ کے باقی ججوں میں جسٹس شیخ عظمت سعید اور جسٹس اعجاز الاحسن شامل تھے۔

ویڈیودیکھنے کےلیے پلے کا بٹن دبائیں

نہال ہاشمی کے وکیل نے وضاحت کیلئے مزید دلائل دینے اور مہلت کی استدعا کی جسے عدالت نے مسترد کردیا۔

نہال ہاشمی کے وکیل نے وضاحت کیلئے مزید دلائل دینے کی مہلت طلب کرتے ہوئے کہا کہ شیطان کو بھی وارننگ دی گئی تھی۔عدالت نے نہال ہاشمی کی استدعا مسترد کرتے ہوئے ان پر فرد جرم عائد کردی۔

ویڈیودیکھنے کے لیے پلے کا بٹن دبائیں

اس موقع پر بینچ کے سربراہ فاضل جج جسٹس اعجاز افضل نے کہا کہ ہم صبر و تحمل سے ہر سماعت کرتے ہیں،آپ کو جیل نہیں بھیجاجارہا ہے صرف فرد جرم عائد کرکے کارروائی کا آغاز کیا گیاہے۔

آپ کو صفائی کو پورا موقعہ دیا جائیگا، عدالت نے چارج شیٹ نہال ہاشمی کے حوالے کی جس پر نہال ہاشمی نے دستخط کردیئے۔عدالت نے کسی کی مزید سماعت24 جولائی تک ملتوی کردی۔

یہ بھی پڑھیے:

کراچی: جے آئی ٹی کے خلاف دھمکی آمیز بیان، نہال ہاشمی کی عبوری ضمانت منظور

نہال ہاشمی نے توہین عدالت کیس کی سماعت روکنے کی استدعا کردی

Comments are closed.

Scroll To Top