تازہ ترین
این اے 13: دوبارہ گنتی میں بھی آزاد امیدوارکامیاب

این اے 13: دوبارہ گنتی میں بھی آزاد امیدوارکامیاب

اسلام آباد: ( 06اگست 2018) قومی اسمبلی کے حلقہ این اے تیرہ مانسہرہ سے پاکستان تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار صالح محمد خان دوبارہ گنتی پر بھی کامیاب قرار پائے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق دوبارہ گنتی میں صالح محمد نےایک لاکھ آٹھ ہزار نو سو پچاس ووٹ حاصل کئے جبکہ ان کے مد مقابل پاکستان مسلم لیگ نواز کے سردار شاہ جہاں یوسف نے ایک لاکھ سات ہزار ایک سو چودہ ووٹ حاصل کرسکے۔

یاد رہے کہ ستائیس جولائی کو این اے 13 مانسہرہ سے جیتنے والے قومی اسمبلی کے آزاد امیدوار صالح محمد خان نے بنی گالہ میں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان سے ملاقات کی اور تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کرنے کا اعلان کیا۔

اس دوران پارٹی کے مرکزی رہنما جہانگیر ترین، سابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک اور سینیٹراعظم سواتی اور بھی موجود تھے۔ عمران خان نے پی ٹی آئی میں شمولیت پر صالح محمد کا خیر مقدم کیا۔دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف نے عمران خان کو وزیراعظم کا باضابطہ امیدوار نامزد کرنے کیلئے پارلیمانی پارٹی کا اجلاس کل طلب کرلیا۔

عام انتخابات میں واضح اکثریت کے بعد تحریک انصاف وفاق میں حکومت سازی کیلئے مصروف ہے اور اس سلسلے میں اسے آزاد امیدواروں سمیت ایم کیوایم اور (ق) لیگ کی حمایت بھی مل چکی ہے۔

ویڈیودیکھنے کیلئے پلے کابٹن دبائیں

ترجمان تحریک انصاف فواد چوہدری کےمطابق پارٹی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس کل بنی گالہ میں طلب کیا گیا ہے جس میں تمام منتخب ارکان کو شرکت یقینی بنانے کی ہدایت گئی ہے۔ فواد چوہدری کا کہنا ہےکہ کل کے اجلاس میں عمران خان کو وزیراعظم کا باضابطہ امیدوار نامزد کیا جائے گا۔

ترجمان پی ٹی آئی کے مطابق آزاد ارکان کی شمولیت کے بعد تحریک انصاف کے ارکان کی تعداد 125 ہوگئی ہے جبکہ وزیراعظم کے لیے اتحادیوں، خواتین اور اقلیتوں کے ساتھ تحریک انصاف کا نمبر 174 تک جا پہنچا ہے جو اپوزیشن سے زیادہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ بلوچستان نیشنل پارٹی کی حمایت کے بعد نمبر گیم 177 تک پہنچ جائے گا۔

ویڈیودیکھنے کیلئے پلے کابٹن دبائیں

دوسری جانب تحریک انصاف نے حکومت سازی سے متعلق اہم فیصلے کرلیے ہیں جس کے تحت ممکنہ وزیراعظم عمران خان کی وفاقی کابینہ مختصر ہوگی۔

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے حکومت سازی کے بعد پہلے مرحلے میں 15 سے 20 وزراء پر مشتمل کابینہ تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ عمران خان کی وفاقی کابینہ میں متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کا بھی ایک وزیر ہوگا اور بعد میں ایم کیو ایم سے ایک مشیر لیا جائے گا۔

ویڈیودیکھنے کیلئے پلے کابٹن دبائیں

ذرائع کے مطابق ایم کیو ایم کو وزارت پورٹ اینڈ شپنگ اور وزارت محنت و افرادی قوت دینے پر غور کیا جارہا ہے۔

ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ق) کے چوہدری پرویز الٰہی پنجاب اسمبلی میں اسپیکر ہوں گے تاہم مرکز میں مسلم لیگ (ق) کو کوئی وزارت نہیں ملے گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وفاقی کابینہ میں بلوچستان، سندھ، خیبر پختونخوا اور پنجاب کی نمائندگی ہوگی اور زیادہ تعداد ارکان قومی اسمبلی کی ہوگی جب کہ اتحادیوں کو بھی اہم وزارتیں ملنے کا امکان ہے۔

ذرائع کے مطابق وفاقی کابینہ کی اولین ترجیح سادگی اور کفایت شعاری اپنانا ہوگی اور وزراء کی کارکردگی عمران خان خود مانیٹر کریں گے۔

یہ بھی پڑھیے

تحریک انصاف نے گورنر سندھ کیلئے عمران اسماعیل کا نام فائنل کرلیا

پاکستان تحریک انصاف نےپارلیمانی پارٹی کا اجلاس کل طلب کرلیا

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top