تازہ ترین
جیل جانے سے کبھی نہیں ڈرتا، آصف علی زرداری

جیل جانے سے کبھی نہیں ڈرتا، آصف علی زرداری

اسلام آباد:(20 فروری 2019) سابق صدر آصف علی زرداری کا کہنا ہے کہ جیل میرا دوسرا گھر ہے اس سے کبھی نہیں ڈرتا، ہم عدالت کے فیصلے پہلے بھی مانتے تھے اور اب بھی مانیں گے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین نے سیاسی معاملات پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان پہلے ہی عالمی سطح پر تنہائی کا شکار تھا اور ان کے آنے کے بعد اور بھی آئی تنہائی کا شکار ہو چکا ہے، مگر یہ نادان نہیں سمجھتے کہ آج کے دور میں کوئی بھی ملک اکیلا ترقی نہیں کر سکتا۔

سابق صدر نے کہا کہ سعودی ولی عہد کی آمد پر حکومت نے اپوزیشن کو نہ بلا کر مس ہینڈلنگ کی، بس ایک چارلی سے ٹویٹ کرادیا اور کہا کہ کسی اپوزیشن کو دعوت نہیں دی گئی۔

آصف زرداری نے کہا کہ نظر ثانی درخواستوں پر سپریم کورٹ کا فیصلہ قبول کرتے ہیں، ہم ماضی میں بھی کیسز دیکھ چکے ہیں، جیل میرا دوسرا گھر ہے اور بلاول بھی نہیں ڈرتا کیوں کہ وہ بھی میرا ہی بیٹا ہے، ہم پر گھیرا تنگ نہیں ہوسکتا۔

اسپیکر سراج درانی کی گرفتاری کی مذمت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ منگی صاحب سندھ سے ہیں اور اپنی ہی بجلیاں گراتے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں کہا کہ میرا احتجاج عوام کو ملنے والی ناکافی سہولیات اور گیس بجلی کی بلوں پر ہے،18ویں ترمیم کے سوال پر زرداری نے کہا کہ ہم نے الیکشن کے دوران زورد ڈالا، میں کہہ چکا ہوں کہ میرے خلاف ایسا کیس بناؤ کہ غدار قرار دے دو لیکن چوری کے کیسز نہ بناؤ، مجھے تمام کیسز میں انصاف ملے گا، 18 ویں ترمیم کے خلاف غداری کا الزام بھی قبول ہے۔

سابق صدر نے کہا کہ بھارت جارحیت کی جرات کرے گا تو منہ توڑ جواب دیں گے، ’ہم سب پاک فوج کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ جب میں صدر تھا اس وقت بھی اسی قسم کی صورتحال پیدا ہوئی تھی۔ اس وقت نابالغ حکومت کو سمجھ نہیں آرہی، بیک سیٹ ڈرائیور سیاست نہیں سمجھتا۔ ایران ہمارا پڑوسی ملک ہے انہیں شک ہے تو مشترکہ تحقیقات ہونی چاہیئے۔

Comments are closed.

Scroll To Top