تازہ ترین
پاکستان اور ایران کا سیکیورٹی و معاشی تعاون بڑھانے پر اتفاق

پاکستان اور ایران کا سیکیورٹی و معاشی تعاون بڑھانے پر اتفاق

تہران: (8 جنوری 2018) مشیر قومی سلامتی کا کہنا ہے کہ غیر ملکی سازشوں کے خلاف مسلم ممالک کو آپس میں تعلقات کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی نے تہران میں پاکستان کی قومی سلامتی کے امور کے مشیر ناصر خان جنجوعہ سے ملاقات میں کہا کہ ایران اس بات کی اجازت نہیں دے گا کہ بعض ممالک دہشت گردوں کو کرائے پر لے کر اور انہیں ہتھیار فراہم کرکے سرحدوں پر بدامنی پھیلائیں اور تہران اور اسلام آباد کے تعلقات پر اثر انداز ہوں۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

شمخانی نے امریکہ کی نئی نیشنل سیکیورٹی حکمت عملی پر نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ کے دوہرے معیار پر مسلم ممالک کو چوکنا رہنے اور آپس میں تعلقات کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔اس موقع پر پاکستان کے قومی سلامتی کے مشیر نے کہا کہ مسلمانوں کو غیر ملکی سازشوں سے محتاط رہنے کی ضرورت ہے جن کا مقصد ان کے درمیان تصادم کرانا ہے۔

ناصر خان جنجوعہ نے کہا کہ پاکستان ایران کے ساتھ اقتصادی اور سلامتی کے شعبوں میں تعاون جاری رکھے گا۔ایران کے اعلیٰ قومی سلامتی کے سیکرٹری نے سرحدوں پر پائیدار سیکورٹی کے تحفظ ، منشیات، انسانی اور اسلحے کی اسمگلنگ کے خلاف مشترکہ کارروائیاں کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ناصرخان جنجوعہ نے مغربی ایشیا میں ایک طاقتور موثر اور امن و استحکام کے حامل ملک کی حیثیت سے ایران کی مضبوط پوزیشن کا ذکرکرتے ہوئے کہا کہ پاکستان، ایران کے ساتھ اقتصادی اور تجارتی تعاون میں توسیع کا خیرمقدم کرتا ہے۔اس ملاقات میں دوطرفہ تعلقات کی توسیع و باہمی دلچسپی کے مسائل سمیت اہم علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر بھی بات چیت ہوئی۔

یہ بھی پڑھیے

ایران کی صورتحال پر بلایاگیاسلامتی کونسل کااجلاس بے نتیجہ ختم

ایران نے امریکا کے خلاف اقوام متحدہ کو خط لکھ دیا

Comments are closed.

Scroll To Top