تازہ ترین
ڈیفنس واقعہ: پولیس نے ریسٹورنٹ کے دو افسران کو گرفتار کرلیا

ڈیفنس واقعہ: پولیس نے ریسٹورنٹ کے دو افسران کو گرفتار کرلیا

کراچی:(19 دسمبر 2018) ڈیفنس میں زہریلا کھانا کھانے سے دو بچوں کی ہلاکت کے معاملے پر ریسٹورنٹ کے دو ملازم گرفتار کر لیے گئے ہیں،

تفصیلات کے مطابق مبینہ زہریلا کھانا کھانے سے گذشتہ ماہ دو بچوں کی ہلاکت کی تحقیقات میں پیش رفت ہوئی ہے اور ڈیفنس میں واقع ریسٹورنٹ کے دو ملازمین کو گرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق تفتیشی پولیس نے عامر اختر اور عرفان علیم کو گرفتار کر کے تھانے منتقل کر دیا ہے۔

پولیس ذرائع کے مطابق گرفتار ملزمان کو مقدمہ نمبر 206/18 میں گرفتار کیا گیا ہے، مقدمہ قتل بالسبب اور کھانے پینے کی اشیا میں بھی ملاوٹ کی دفعات کے تحت درج کیا گیا۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

واضح رہے کہ 10 نومبر کو کلفٹن کریک وسٹا اپارٹمنٹ کے رہائشی دو بچے مضر صحت کھانا کھانے سے جاں بحق ہو گئے تھے۔ واقعے کا گورنر سندھ نے نوٹس لیتے ہوئے رپورٹ طلب کی تھی، اس کے بعد پولیس نے پلے لینڈ سے پانچ افراد کو حراست میں بھی لے لیا تھا۔جاں بحق ہونے والے بچوں میں ڈیڑھ سالہ احمد اور پانچ سالہ محمد شامل ہیں جبکہ بچوں کی والدہ عائشہ کو بھی تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

واقعے کے بعد ریسٹورنٹ کو فوری طور پر سیل کرتے ہوئے کھانوں کے نمونے تجزیے کےلئے بھجوائے گئے، میڈیکل رپورٹ کے مطابق کھانے کے سیمپل میں خوراک کے غیر میعاری ہونے کے ثبوت ملے ہیں۔رپورٹ میں انکشاف کیا گیا تھا کہ بچوں کو غیر معیاری کھانا کھانے سے فوڈ پوائزننگ ہوئی، فوڈ پوائزننگ سے بچوں کو الٹیاں ہوئیں۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

واضح رہے کہ بچوں کی ہلاکتوں کے المنا ک واقعہ کے بعد سندھ فوڈ اتھارٹی کی ٹیم نے ریسٹورنٹ پر چھاپہ مارتے ہوئے انتظامیہ کی جانب سے کچن اور گودام میں موجود خام مال منتقل کرنے کی کوشش ناکام بنا دی تھی، جہاں کئی کلو خراب گوشت، زائد المیعاد شربت کی سینکڑوں بوتلیں اور دیگر اشیاء آمد کرلیں ۔

حکام کا کہنا ہے کہ سامان منتقل کرنے والے مزدوروں سے پوچھ گچھ کی گئی تو پتہ چلا کہ ریسٹورنٹ کے مالک نے انہیں خام مال کالے تھیلوں میں بھر کر کہیں دور پھینکنے کا کہا، ریسٹورنٹ مالکان غائب ہیں اور ان سے کسی قسم کارابطہ نہیں ہورہا ہے ۔

پولیس کے مطابق اسی روز جس دن بچوں اور ان کی والدہ نے ریسٹو رنٹ سے کھانا کھایا تقریباً تین سو افراد نے اسی دن ریسٹورنٹ سے کھانا کھایا، شہر کے تمام ہسپتال چیک کئے لیکن فوڈ پوائزن کا کوئی کیس نہیں مل سکا ۔

Comments are closed.

Scroll To Top