تازہ ترین
جے آئی ٹی نے اہم حقائق کو نظر انداز کیا، دانیال عزیز

جے آئی ٹی نے اہم حقائق کو نظر انداز کیا، دانیال عزیز

اسلام آباد: (17جولائی،2017)مسلم لیگی رہنما دانیال عزیز نے الزام عائد کیا ہے کہ جے آئی ٹی کے ایک ایک صفحے کی تشریح کی جا رہی ہے مگر صفحہ 73 اور57 کے بارے میں کچھ نہیں کہا جا رہا۔

سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے دانیال عزیز کا کہنا تھا کہ جے آئی ٹی نے اپنی رپورٹ میں اہم حقائق کو نظرانداز کردیا ۔ جے آئی ٹی کی رپورٹ حتمی نہیں بلکہ ابہام پر مبنی ہے، اس میں موسٹ لائیکلی یا ممکنہ طور پر کا لفظ بہت زیادہ استعمال کیا گیا ہے۔

لیگی رہنما نے جے آئی ٹی کی آڈیو وڈیو ریکارڈنگ کو بھی منظر عام پر لانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ کیس کا اہم جزو مے فیئر فلیٹس ہیں لیکن لندن سے جس ٹرسٹ کی تصدیق ہورہی ہے اسے بھی متنازع بنایا جا رہا ہے ۔ رپورٹ میں نواز شریف جائیداد کے حوالے سے شکوک و شبہات کا اظہار کیا گیا ۔

ویڈیودیکھنے کےلیے پلے کا بٹن دبائیں 

دانیال عزیز نے کہا کہ لندن فلیٹ سے متعلق صفحہ تہتر کو ملحوظ خاطر نہیں رکھا گیا ہے اور نہ ہی صفحے ستاون کے بارے میں کچھ نہیں کہا جا رہا ہے۔ یہ وہ ثبوت ہے جو جے آئی ٹی نے خود دئیے ہیں۔


نعیم بخاری پر طنز کرتے ہوئے دانیال عزیز نے کہا کہ سپریم کورٹ میں اسٹپنی وکیل دلائل دے رہا ہے ۔ نواز شریف اور ان کے خاندان کے خلاف دہشت گردی کا کوئی الزام نہیں لیکن منروا سروسز سے کہا گیا کہ اگر حساب نہ دیا گیا تو دہشت گردی کی دفعات کے تحت آپ جیل جائیں گے۔

دانیال عزیز کا مزید کہنا تھا کہ کسی قسم کی حتمی رائے کو رپورٹ میں شامل نہیں کیا گیا، ججز نے بار بار دستاویزات کے تصدیق کے سوالات اٹھائے تفتیش کے دوران جے آئی ٹی اپنے اصل راستے سے ہٹ گئی ہے ۔ لہذاجے آئی ٹی کی رپورٹ کو مسترد کیاجائے ۔ انہوں نے کہا کہ قانو ن کی بالا دستی کرنی ہے تو سب کریں۔

یہ بھی پڑھیے

خیبرپختونخوا حکومت نے اشتہاری مجرم کو پناہ دے رکھی ہے، دانیال عزیز

ایک سال سے مریم نواز کے خلاف سازشیں جاری ہے، دانیال عزیز

Comments are closed.

Scroll To Top