تازہ ترین
انڈونیشیا میں زلزلہ اور سونامی میں بارہ سو سے زائد افراد ہلاک

انڈونیشیا میں زلزلہ اور سونامی میں بارہ سو سے زائد افراد ہلاک

پالو: (2 اکتوبر 2018) انڈونیشا میں خوفناک سونامی بارہ سوسےزائدافراد کی جانیں نگل گیا۔ ریسکیو اہلکار ملبے تلے دبے لوگوں کو نکالنے میں اب بھی مصروف ہیں۔ لاکھوں افراد بےگھر ہوگئے۔ پچاس لاپتہ افراد کی تلاش کا کام بھی جاری ہے۔ اقوام متحدہ کا کہناہے کہ دو لاکھ افراد امداد کےمنتظر ہیں۔ حکام نے عالمی امداد قبول کرنے کا اعلان کیا ہے۔ قدرتی آفت کافائدہ اٹھایا انڈونیشن قیدیوں نےاور ایک ہزار مجرم جیل سےفرار ہوگئے۔

خبررساں ایجنسی کے مطابق انڈونیشاکے شہر پالو میں سونامی اور زلزلےنے تباہی مچادی ہے۔ دن گزرنے کے ساتھ ساتھ مرنےوالوں کی تعداد میں اضافہ ہوتاجارہا ہے۔ مختلف واقعات میں ہلاکتیں ایک سو بارہ تک جاپہنچی ہیں۔ امدادی ٹیمیں ملبے تلے دبے ہوئے لوگوں کوباہر نکالنے کے لیےکارروائیاں کررہی ہیں۔ عوام کوخوارک کی کمی کا سامناہے۔ لاکھوں افراد امداد کےمنتظر ہیں۔ بے گھر افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کر رہے ہیں۔ ہلاک افراد کواجتماعی قبروں میں دفنانے کاسلسلہ بھی جاری ہے۔ عالمی ادارے ریڈ کراس کےمطابق قدرتی آفات میں تقریبا سولہ لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں۔انڈونیشین صدر جوکو وڈوڈو نے متاثرہ علاقے کا دورہ کیا تھا اور انہوں امدادی کارروائیاں تیز کرنے کی ہدایت کی تھی۔ عالمی ادارے ریڈ کراس کے مطابق قدرتی آفات میں تقریبا سولہ لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں۔ تھائی لینڈ اور آسٹریلیا نے متاثرین کی امداد کا اعلان کردیا۔ سونامی اور زلزلے کا فائدہ اٹھایا انڈونیشیا کے قیدیوں نے اورموقع دیکھ کر ایک ہزار سے زائد قیدی جیل فرار ہوگئے۔زلزلے کا مرکز پالو شہر کے قریب واقع ماہی گیروں کے قصبے ڈونگ گالا سے 27 کلو میٹر دور سمندر میں تھا۔ جس سے بننے والی سونامی کی اونچی لہروں نے سولاویسی شہر میں تباہی مچا دی۔ انتظامیہ کے مطابق شہر میں ساڑھے تین لاکھ افراد رہائش پذیر تھے۔

یہ بھی پڑھیے

انڈونیشیا میں سونامی اور زلزلہ سے ہلاکتوں کی تعداد 844 ہو گئی

جاپان:سمندری طوفان نے تباہی مچادی، 2ہلاک، 120زخمی

 

Comments are closed.

Scroll To Top