تازہ ترین
گرو گرمیت کو 20سال سزا کے بعد 2افراد کے قتل کے مقدمے کا فیصلہ جلد متوقع

گرو گرمیت کو 20سال سزا کے بعد 2افراد کے قتل کے مقدمے کا فیصلہ جلد متوقع

نئی دہلی:(28اگست،2017) بھارت میں سکھوں کے فرقے ڈیرا سچاسودا کے جعلی گرو گرمیت ایک صحافی سمیت قتل کے دو مقدمات پر فیصلہ آئندہ دو ماہ میں ہوگا جبکہ جعلی گرو کو دو خواتین سے زیادتی کے الزام میں زیادتی پردس دس سال قید بامشقت کی سزا سنائی گئی ہے۔

سکھوں کے فرقے ڈیرا سچا سودا کے گرو گرمیت پر دو ہزار دو میں آشرم کے مینیجر اور ایک صحافی چترپتی کو قتل کرنے کے مقدمات چل رہےہیں۔ان کا فیصلہ ستمبر اور اکتوبر میں سنایا جائے گا۔قوی امکان ہے کہ گرو کو سزائے موت ہوگی۔

گرو کو 2002 میں دو خواتین سے زیادتی کے مقدمے میں عدالت نے اسے 10،10 برس کی سزا سنائی لیکن ایک سزا پوری ہونے پر دوسری شروع ہوگی۔

گرمیت نے خود بھی جج کے سامنے اعتراف جرم کیااور رحم و سزا کم کرنے کی اپیل کی۔ ہٹ دھرم گرو عدالت کے کمرے میں ہی دھرنا دے کر بیٹھ گیا۔پولیس نے اس کو گھسیٹ کر کمرہ عدالت سے باہر نکالا،پولیس ہیلی کاپٹر کے ذریعے گرمیت کو روہتک جیل پہنچایا۔

گرو کے چیلوں نے عدالت کو گھیرے میں لیاہوا تھالیکن فیصلہ سنانے والے سی بی آئی کی عدالت کے جج کو ہیلی کاپٹر کے ذریعے عدالت پہنچایا گیا۔

صحافی چتر پتی نے گرو کے آشرم میں خواتین سے زیادتی کی خبر چھاپی تھی جس کی پاداش میں اسے گھر کے باہر قتل کرادیا گیا تھا۔گرو کے کالے کارنامے دیکھ کر آشرم کا مینیجر بھی آشرم چھوڑنا چاہتا تھالیکن گرو نے اسے بھی قتل کرادیا تھا۔

گرو کو سزا کے عدالتی فیصلے کے بعد ایک مرتبہ پھر ریاست ہریانہ، پنجاب، راجستھان اور دیگر ریاستوں میں اس کے لاکھوں عقیدت مندوں نے گاڑیاں جلانا اور املاک کو نقصان پہنچانا شروع کردیا۔

ہریانہ کے کچھ اضلاع میں کرفیو اور دیگر ریاستوں میں دفعہ 144 کے نفاذ کے باوجود مظاہرین بے قابو ہیں اور مدد کیلئے فوج کو طلب کرکرلیا گیاہے۔

یہ بھی پڑھیے:

گرو گرمیت کی سزا پر کشیدگی برقرار، پرتشدد واقعات میں ہلاکتوں کی تعداد 39 ہو گئی

ہریانہ:سکھوں کے پیشوا گروگرمیت کو عدالت نے زیادتی کا مجرم قرار دے دیا

Comments are closed.

Scroll To Top