تازہ ترین
کوئٹہ میں دہشت گردوں کی فائرنگ ، 4 سیکیورٹی اہلکار شہید

کوئٹہ میں دہشت گردوں کی فائرنگ ، 4 سیکیورٹی اہلکار شہید

کوئٹہ: (14 فروری 2018) کوئٹہ کے علاقے لانگو آباد میں نامعلوم دہشت گردوں نے سیکیورٹی فورسز کی گاڑی پر فائرنگ کی ہے، جس کے نتیجے میں چار سیکیورٹی اہلکار شہید ہوگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پولیس وین معمول کے مطابق گشت پر تھی کہ نامعلوم مسلح افرادنے فائرنگ کی جس کے نتیجے میں 4 سکیورٹی اہلکار شہید ہو گئے۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

واقعے کی اطلاع ملتے ہی امدادی ٹیمیں اور سیکیورٹی فورسز جائے حادثے پر پہنچی اور شہید اہلکاروں کے جسد خاکی کو سول اسپتال کوئٹہ منتقل کیا جبکہ سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لیتے ہوئے سرچ آپریشن کا آغاز کردیا ہے۔

شہید ہونے والے جوانوں کی شناخت نائیک سعید، لانس نائیک محمد شبیر، لانس نائیک اسلم اور سپاہی امجد ھارون کے نام سے کی گئی ہے، چاروں جوان ایف سی اہلکار تھے۔واقعےمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے آئی جی بلوچستان معظم جاہ کا کہنا تھا کہ علاقے میں کوئی سی سی ٹی وی کیمرا نہیں ہے، شواہد کا جائزہ لے رہے ہیں، جلد دہشت گردوں کو گرفتار کرلیں گے۔

گورنر بلوچستان محمد خان اچکزئی اوروزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو نےواقعے کی مذمت کرتے ہوئے ملزمان کی فوری گرفتاری کا حکم دے دیا ہے۔وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے کوئٹہ میں سیکیورٹی فورسز کی گاڑی پرفائرنگ کی شدید مذمت کرتے ہوئے شہید اہلکاروں کے لواحقین سے اظہار تعزیت کی۔

شہبازشریف نے کہا کہ شہید اہلکار پوری قوم کے ہیرو ہیں، امن کے لیے جانوں کا نذرانہ دینے والوں کو قوم سلام پیش کرتی ہے، وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ دہشت گرد انسانیت کے دشمن ہیں، بزدلانہ کارروائیاں دہشت گردی کے خلاف عزم کوکمزورنہیں کرسکتیں۔بلاول بھٹو اور آصف زرداری نے بھی کوئٹہ میں دہشت گردی کے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے سیکیورٹی فورسز کے اہلکاروں کی شہادت پر اظہار افسوس کیا ہے۔ بلاول بھٹو نے کہا کہ شہدا کی قربانی کبھی رائیگاں نہیں جائیگی، مٹھی بھر دہشت گردوں کے خلاف سیکیورٹی فورسز جوان مردی سے لڑ رہی ہے، انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ہماری قوم اور مسلح افواج ملکر دہشتگردی کو شکست دینگے

یہ بھی پڑھیے

کوئٹہ: گھریلو تنازع، تین افراد جاں بحق

فیصل آباد: گھریلو جھگڑے پر شوہر نے بیوی کو چھریاں مار دیں

Comments are closed.

Scroll To Top