تازہ ترین
طالبان اور امریکہ کے درمیان کل ہونے والے مذاکرات ملتوی

طالبان اور امریکہ کے درمیان کل ہونے والے مذاکرات ملتوی

اسلام آباد:(17 فروری 2019) امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغان مفاہمتی عمل زلمے خلیل زاد کا دورہ پاکستان تاخیر کا شکار ہوگیا ہے، جس کے باعث طالبان اور امریکہ کے درمیان کل ہونے والے مذاکرات ملتوی ہوگئے ہیں۔

سفارتی ذرائع کے مطابق امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغان مفاہمتی عمل زلمے خلیل زاد کو تین روزہ دورے پر 18 فروری کو اسلام آباد پہنچنا تھا، تاہم وہ کل پاکستان نہیں پہنچ سکیں گے، اس کے ساتھ ساتھ طالبان کا وفد جسے آج پاکستان پہنچنا تھا ان کی بھی پاکستان آمد میں تاخیر ہوگئی ہے، جس کے باعث طالبان اور امریکہ کے درمیان کل اسلام آباد میں ہونے والے مذاکرات ملتوی کردئیے گئے ہیں۔

اس سے قبل افغان طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کی جانب سے مذاکرات کے نئے مرحلے کے حوالے سے بیان سامنے آیا تھا، ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کے مطابق طالبان اور امریکا کے درمیان مذاکرات اٹھارہ فروری کو اسلام آباد میں ہوں گے۔ یہ ملاقات حکومت پاکستان کی جانب سے باضابطہ دعوت پر ہورہی ہے۔

ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد نے بتایا کہ طالبان کی مذاکراتی ٹیم وزیراعظم عمران خان سے بھی ملاقات کرے گی۔ ملاقات میں پاک افغان تعلقات، افغان مہاجرین اور تاجروں سے متعلق امور زیر بحث آئیں گے۔

ترجمان افغان طالبان کے مطابق معاہدے کے مطابق امریکا اور طالبان کے درمیان پچیس فروری کو دوحہ قطر میں بھی مذاکرات ہوں گے۔

Comments are closed.

Scroll To Top