تازہ ترین
صوبےمیں پولیو وائرس کے مسلسل نمودار ہونے کی وجوہات کاتعین کیاجائے، وزیراعلی سندھ

صوبےمیں پولیو وائرس کے مسلسل نمودار ہونے کی وجوہات کاتعین کیاجائے، وزیراعلی سندھ

کراچی (9 جنوری 2018)وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے صوبے میں مسلسل پولیو کے کیسز سامنے آنے کی وجوہات کی تحقیق کا حکم دے دیاہے۔

وزیراعلی سندھ کی زیرصدارت پولیو کے خاتمےسے متعلق صوبائی ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا،جس میں وزیر صحت، ایم این اے عذرا پیچوہو، وفاقی حکومت، عالمی ادارہ صحت، یونیسف کے نمائندوں، آئی جی سندھ و دیگر نے شرکت کی۔اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے پولیو کوآرڈینیٹر نے بتایا کہ کراچی کے سہراب گوٹھ ، اورنگی نالا ، بختاور گوٹھ ،گڈاپ، لانڈھی اور چند دیگر علاقوں میں کچرے کے باعث پولیو وائرس موجود ہے جبکہ افغانستان سے بھی کراچی کی جانب پولیو وائرس کی منتقلی ہوتی ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ 2017 میں سندھ میں پولیو کے2 کیسز سامنے آئےجوکہ دونوں کراچی کے تھے، اس حساب سے پولیو کیسز پر بڑے پیمانے پر کنٹرول کیا گیاہے جبکہ تاحال صوبے میں پولیو کیسز کا نمودارہونا سب کی جانب سے  مزید محنت کا تقاضہ کرتاہے۔وزیراعلی نے متعلقہ افراد کو صوبے میں پولیو وائرس کے متواتر ظاہر ہونے کی وجوہات کا تعین کرنے کےلیے جامع تحقیقات کا حکم دیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے:

شہرقائد میں سال کی آخری پولیو مہم کا آغاز

ضلع کرک کے2بچوں میں پولیو کے مشتبہ کیسز کا انکشاف

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top