تازہ ترین
صوبائی وزیر کاثقافت کےنام پرکروڑوں روپےخرچ کرنے کامنصوبہ،فنکاروں  کی مخالفت

صوبائی وزیر کاثقافت کےنام پرکروڑوں روپےخرچ کرنے کامنصوبہ،فنکاروں کی مخالفت

کراچی : (24ستمبر،2017،ڈپٹی بیوروچیف ابتک نیوز امتیاز چانڈیو)صوبائی وزیرثقافت سردار شاہ نےسندھ کی ثقافت کے نام پر کروڑوں روپے لندن میں خرچ کرنے کا پلان تیارکرلیا ہے جس کی نامور فنکاروں نے مخالفت کردی ہے۔

صوبائی وزیر ثقافت کی جانب سے صوفی کلچرل فیسٹول کے نام سے لندن میں شو کرنے کے لیے ایک ارب تک خرچ کرنےکامنصوبہ بنایاگیاہے۔ صوبائی وزیر سردار شاہ نے اپنے دوستوں کے ساتھ مل کر 7 اکتوبرکو لندن میں ثقافتی پروگرام بنایا ہے۔

ویڈیودیکھنے کےلیےپلے کا بٹن دبائیں

وزیرثقافت سردار شاہ نے اپنے دوستوں کو نوازنے کے لئے ملی بھگت کر کے پروگرام بنایاہے،وزیرثقافت نےاس پروگرام کے انعقاد کےلیے ایک تنظیم کو بھی اپنے ساتھ ملالیاہے۔

اسی پروگرام کے حوالے سے فنکاروں نے سیکریٹری ثقافت اکبر لغاری پر بھی الزام لگایا ہے کہ وہ منی لانڈرنگ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں،اکبر لغاری کی فیملی کینیڈا میں مقیم ہے اور وہ ہر پروگرام کے بعد چھٹی لیکرکینیڈاروانہ ہوجاتے ہیں۔

سندھ کی ثقافت  کے نام پر کروڑوں روپے بہانے کی نامورفنکاروں قیصر نظامانی، فنکار وحید ھکڑو اور دیگر نے مخالفت کی ہے۔

اس سےقبل بھی وزیر ثقافت سندھ سید سردار شاہ کے خلاف دوستوں کو نوازنے کی خبر منظر عام پر آئی تھی۔

وزیر موصوف نے ٹوئرسٹ کنسلٹنٹ کی انوکھی اسامی پیدا کر کے اپنے دوست کو بھرتی کروایاتھا جبکہ انھوں نے اپنے ہی محکمے میں سیاسی سپورٹ حاصل کرنے کے لئے ایک اور دوست اور معروف بزنس مین قاسم سراج سومرو کو پاکستان پیپلزپارٹی کلچر ونگ سندھ کا صدر بنوایاتھا۔

ویڈیودیکھنے کےلیے  پلےکابٹن دبائیں

یہ وزیرثقافت سید سردار شاہ ہی تھے جنھوں نے اپنے پرانے بیوروکریٹ دوست اکبر لغاری کو سیکریٹری ثقافت و سیاحت تعینات کروایا۔

 صوبائی وزیر نے  میڈیا سے تعلق رکھنے والے ایک سابق حامی کو میڈیا کنسلٹنٹ کے بجائے ٹوئرسٹ کنسلٹنٹ تعینات کروا یاتھا، جس کی تنخواہ 2 لاکھ سے زائد بتائی گئی تھی۔

Comments are closed.

Scroll To Top