تازہ ترین
یمن جنگ میں عرب اتحاد کی فوجی مدد ختم کی جائے،امریکی سینیٹ میں قرارداد منظور

یمن جنگ میں عرب اتحاد کی فوجی مدد ختم کی جائے،امریکی سینیٹ میں قرارداد منظور

واشنگٹن (14دسمبر، 2018) امریکی سینیٹ نے قرارداد منظور کی ہے جس میں کہا گیاہے کہ یمن جنگ میں عرب اتحاد کی فوجی مدد ختم کردی جائے۔56 ارکان نے قرارداد کے حق میں جبکہ 41 نے مخالفت میں ووٹ دیا۔

امریکی ٹی وی کے مطابق یمن جنگ سے متعلق قرارداد کا مسودہ امریکی سینیٹر برنی سینڈرز اور دیگر نے ایوان میں پیش کیا۔قرارداد کے حق میں 56ووٹ آئےجبکہ 41نے مخالفت میں ووٹ دیا۔قرارداد میں حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ یمن میں سعودی عرب،متحدہ عرب امارات اور دیگر عرب اتحادیوں کی جنگ کی فوجی مدد ختم کردی جائے۔

عرب اتحاد کے طیارے امریکا سے ایندھن، اسلحہ اور دیگر سامان لیتےہیں۔

اس سےقبل  اقوام متحدہ کے سربراہ انٹونیوگوتیرس کا کہنا ہےکہ حریفوں نے یمن میں فائربندی پر اتفاق کرلیا ہے۔ انٹونیوگو تیرس نے سویڈن میں مذاکرات کے دوران اتحادیوں کی جانب سے یمن میں جنگ بندی کا اعلان کیا ہے۔

اقوام متحدہ کے سربراہ انٹونیو گوتیرس نے سوئیڈن میں یمن مذاکرات سےمتعلق کہا ہے کہ حریف اب باہمی تفہیم تک پہنچ گئے ہیں۔ اتحادی یمن میں جنگ بندی پر رضامند ہوگئے ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ اتحادیوں کی ڈیل سےیمن میں قحط کےبحران پرکافی اچھا اثرہوگا، قحط سالی میں کمی آئے گئی۔ انٹونیو گوتیرس نےکہا ہے کہ سوئیڈن میں یمن امن مذاکرات کا دوسرا مرحلہ جنوری کے آخرمیں ختم ہوگا۔دوسری جانب اقوام متحدہ کی رپورٹ کےمطابق اگر یمن میں جنگ بندی نہیں کی گئی تو 14 ملین یمنی عوام قحط کے سنگین بحران کا سامنا کرے گی۔ یاد رہے کہ سال 2015 میں یمن جنگ میں 10 ہزار افراد ہلاک ہوئے تھے۔

یہ بھی پڑھیے

فرانس کی مارکیٹ میں فائرنگ کا معاملہ، فائرنگ کرنے والے شخص کا پوسٹر جاری

مقبوضہ بیت المقدس میں اسرائیلی فوج کی ریاستی دہشتگردی جاری

یہ بھی پڑھیے:

Comments are closed.

Scroll To Top