تازہ ترین
چلڈرن اسپتال میں ڈاکٹروں کی مبینہ غلفت سے 7 سالہ بچی جاں بحق

چلڈرن اسپتال میں ڈاکٹروں کی مبینہ غلفت سے 7 سالہ بچی جاں بحق

ملتان: (13 ستمبر 2017) چلڈرن اسپتال میں زیر علاج 7 سالہ بچی ڈاکٹروں کی مبینہ غفلت سے جاں بحق ہوگئی۔ بچی کے لواحقین نے الزام لگایا ہے کہ ڈاکٹروں نے بچی کو غلط انجکشن لگایا جس سے بچی کی موت واقع ہوگئی۔

ملتان میں جلالپور پیروالا کی رہائشی 7 سالہ بچی سیماب زہرا کو کئی دنوں سے بخار کی وجہ سے چلڈرن اسپتال میں داخل کروایا گیا، جہاں ڈاکٹروں کی مبینہ غفلت سے بچی جاں بحق ہوگئی۔ بچی کے والدین نے الزام لگایا ہے کہ ڈاکٹروں نے بچی کوغلط انجکشن لگایا جس کے لگاتے ہی بچی کی دماغ کی شریانیں پھٹ گئیں اور اس کی موت واقع ہوگئی۔

دوسری جانب اسپتال انتظامیہ نے الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ بچی میں کینسر کی تشخیص ہوئی تھی اور اس کا علاج جاری تھا، دوران علاج اس کی موت واقع ہوئی ہے۔ بچی کے والدین نے وزیراعلیٰ پنجاب سے تحقیقت کرانے کا مطالبہ بھی کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

اسلام آباد: ڈاکٹر کی غفلت کے باعث مریض جاں بحق

لیسکو کی غفلت، دو معصوم بچیاں زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا

 

Comments are closed.

Scroll To Top