تازہ ترین
پلے آف میں شرکت کے لئے کراچی کنگز کی لاہور آمد

پلے آف میں شرکت کے لئے کراچی کنگز کی لاہور آمد

لاہور: (19 مارچ 2018) پی ایس ایل تھری کے دوسرے پلے آف میچ میں شرکت کیلئے کراچی کنگز کی ٹیم لاہور پہنچ گئی ہے، گزشتہ رات اسلام آباد یونائیٹڈ نے کراچی کنگز کو ہرا کر فائنل میں جگہ بنائی تھی۔

تفصیلات کے مطابق پی ایس ایل کے پہلے پلے آف میچ میں اسلام آباد یونائیٹڈ کے ہاتھوں شکست کا سامنا کرنے والی کراچی کنگز کی ٹیم اپنا اگلا میچ کھیلنے دبئی سے لاہور پہنچ گئی ہے۔

کراچی کنگز کی آمد کے موقع پر علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے اور کھلاڑیوں کو سیکیورٹی میں ہوٹل منتقل کیا گیا۔یاد رہے کہ پشاور زلمی اور کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے درمیان 20 مارچ کو پلے آف کا دوسرا میچ لاہور میں کھیلا جائے گا اور فاتح ٹیم کا مقابلہ 21 مارچ کو کراچی کنگز سے ہوگا۔

یاد رہے کہ اسلام آباد یونائیٹڈ کی ٹیم کراچی کنگز کو شکست دے کر پی ایس ایل 3 کے فائنل میں پہنچ چکی ہے اور وہ 25 مارچ کو نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں فائنل کھیلے گی۔

اس سے قبل گزشتہ رات لیوک رونکی کی طوفانی اننگز کی بدولت پاکستان سپر لیگ تھری کے کوالیفائر میں اسلام آباد یونائیٹڈ نے کراچی کنگز کو 8 وکٹوں سے شکست دے کر فائنل میں جگہ بنائی تھی۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

اسلام آباد کی اننگز کے دوران لیوک رونکی نے ٹورنامنٹ کی تیز ترین سنچری بنا ڈالی۔یہ پی ایس ایل کی تاریخ کی تیز نصف سنچری تھی۔ رونکی نے 19 گیند پر اپنی نصف سنچری اسکور کی۔ اس سے قبل یہ ریکارڈ عمر اکمل کے پاس تھا جنہوں نے 22 گیندوں پر ففٹی اسکور کی تھی۔

 

رونکی کے 56، 57 اور 63 رنز پر کیچز ڈراپ ہوئے۔

ساتویں اوور ملز کی گیند پر صاحبزادہ فرحان 18 گیندوں پر 27 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔

دسویں اوور کے اختتام پر اسلام آباد نے 124 رنز بنالیے تھے جبکہ لیوک رونکی اور ایلکس ہیلز کریز پر موجود ہیں۔

اس سے قبل کولن انگرام کی شاندار نصف سنچری کی بدولت نے اسلام آباد یونائیٹڈ نے 154 رنز بنائے۔

کراچی کے پہلے آؤٹ ہونے والے بلے باز خرم منظور تھے جو محمد سمیع کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوگئے۔

 

اسی اوور میں محمد سمیع نے بابر اعظم کو بھی چلتا کیا جو جارحانہ اسٹروک کھیلنا چاہتے تھے تاہم جے پی ڈومنی کو کیچ دے بیٹھے۔

تیسرے آؤٹ ہونے والے بیٹسمین کپتان اوئن مورگن تھے جو عماد بٹ کی گیند پر جے پی ڈومنی کے ہاتھوں آؤٹ ہوئے۔

اس کے بعد کولن انگرام اور جو ڈینلی کے درمیان 81 رنز کی شراکت قائم ہوئی جس نے کراچی کے ابتدائی اوورز کے نقصان کا کسی حد تک ازالہ کیا۔جو ڈینلی 51 رنز بناکر فہیم اشرف کی گیند پر ہٹ وکٹ ہوگئے۔

ڈینلی کے آؤٹ ہونے کے باوجود کولن انگرام نے شاندار بیٹنگ کا سلسلہ جاری رکھا اور  6 چھکوں اور ایک چوکے کی مدد سے 39 گیندوں پر 68 رنز کی اننگز کھیل کر کراچی کے مجموعے میں اہم ترین کردار ادا کیا۔

یہ بھی پڑھیے

برینڈن مک کلم کا عمراکمل کو بھائی سے سیکھنےکا مشورہ

پی ایس ایل فائنل کی فضائی نگرانی کا پلان مرتب کرلیا گیا

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top