تازہ ترین
پاکستان کا تاریخی مینار

پاکستان کا تاریخی مینار

لاہور:(13 اگست 2018) اکہتر سالوں میں بہت کچھ بدل گیا۔ ارتقا کے عمل میں یادگاروں کے نام ہی نہیں نقشے بھی بدل گئے ہیں۔ روایتیں بھی جدتوں میں بدل گئیں۔ پاکستان کی امین ایک ایسی یادگار جہاں پاکستان کی بنیاد رکھی گئی، اب جدت کی جھلک دکھا رہا ہے۔ منظر تو بدلا لیکن جذبہ وہی رہا۔ یہ ہے لاہور کے منٹو پارک کا مینار پاکستان جسکی تعمیر کا بیڑہ روثی نژاد بانشدے نے اٹھایا۔

تیئس مارچ انیس سو چالیس کو لاہور کے منٹو پارک میں تاریخی جلسہ کے دوران قیام پاکستان کی بنیاد رکھی گئی اور پھر اسی میدان میں یادگار پاکستان تعمیر کی گئی۔ پہلے منٹو پارک اور پھر مینار پاکستان نہ صرف تاریخ میں رقم ہوگیا بلکہ ہر پاکستانی کے دل میں بھی نقش ہوگیا۔وقت گزرتا گیا اور منظر بھی بدلتا گیا۔ منٹو پارک اب گریٹر اقبال پارک بن چکا ہے۔ پاکستان کی دوسری اور تیسری پیڑی ملک کے طول و عرض سے اسکی سیر کیلئے یہاں آتی ہے۔ تو تاریخ کے ابواب انکے سامنے کھلنا شروع ہو جاتے ہیں۔Image result for minare pakistan oldمینار پاکستان کے ڈیزائن اور تعمیر کا بیڑہ روسی نژاد باشندے نصرالدین مراط خان نے اٹھایا۔ 23 مارچ 1960 سے شروع ہوکر 13 اکتوبر 1969 میں مکمل ہونے والا یہ مینار تاریخی حیثیت رکھتا ہے۔گریٹر اقبال پارک اور مینار پاکستان کی سیر کو آنے والوں کی رائے ہے کہ شاہی قلعہ، مہاراجہ رنجیت سنگھ کی مڑی اور مینار پاکستان سے شہر کے دلفریب نظارے ابھی بھی طلسماتی دنیا میں پہنچا دیتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

اکہتر واں جشن آزادی کل قومی جوش وجذبے کے ساتھ منایا جائے گا

جشن آزادی شایان شان طریقے سے منانے کے لیے تیاریاں جاری

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top