تازہ ترین
پارلیمانی جماعتوں کا آئین میں ترمیم پر اتفاق

پارلیمانی جماعتوں کا آئین میں ترمیم پر اتفاق

اسلام آباد: (15 نومبر 2017) پارلیمانی جماعتوں کا مشاورتی اجلاس ختم ہوگیا ہے۔ اجلاس میں اہم پیشرفت ہوئی ہے۔ پی ٹی آئی کی تجویز پر اگلا اجلاس کل طلب کرلیا گیا۔

اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کی زیر صدارت پارلیمانی رہنماﺅں کا اجلاس ہوا۔ اسپیکر قومی اسمبلی کی زیر صدارت اجلاس میں وزیر قانون زاہد حامد، وزیر سیفران عبدالقادر بلوچ، محمود خان اچکزئی، غلام احمد بلور، شیخ صلاح الدین، شاہ محمود قریشی، شیخ رشید اور جماعت اسلامی کے صاحبزادہ طارق اللہ نے شرکت کی، جبکہ پیپلز پارٹی کا کوئی ممبر شریک نہیں ہوا۔

اجلاس میں چیئرمین نادرا، سیکریٹری الیکشن کمیشن اور شماریات حکام بھی شریک ہوئے۔اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق نے کہا کہ آئین میں ترمیم پر اتفاق ہوگیا ہے۔ کل پارلیمانی جماعتوں کا اجلاس دوبارہ ہوگا۔ پارلیمانی جماعتوں کا اتفاق ہے کہ پپپلزپارٹی کے موجودگی میں بل منظور کیا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ختم نبوت سے متعلق قانون افہام و تفہیم سے حل ہوگا۔

اجلاس میں نئی حلقہ بندیوں سے متعلق امور پر غور کیا گیا، جبکہ نئی حلقہ بندیوں کا بل پہلے ہی قومی اسمبلی میں پیش کیا جا چکا ہے۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

واضح رہے کہ دو روز قبل مسلم لیگ (ن) نے آئینی ترمیم اور حلقہ بندیوں کے معاملے پر تمام سیاسی جماعتوں کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا تھا۔ سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ (ن) کے صدر میاں نوازشریف کی زیر صدارت جاتی امرا میں پارٹی رہنماؤں کا اہم اجلاس ہو اتھا، جس میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق، گورنر پنجاب رفیق رجوانہ، وزیر داخلہ احسن اقبال، وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق اور رانا ثناءاللہ سمیت دیگر رہنما شریک ہوئے۔

یہ بھی پڑھیے

نوازشریف کو پروٹوکول نہیں سیکورٹی دی جارہی ہے، ایاز صادق

نئی حلقہ بندیوں کے ڈرافٹ پر تمام جماعتیں متفق ہیں ، ایاز صادق

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top