تازہ ترین
ٹی بی کے خلاف ادویہ میں وٹامن سی کے مؤثر کردار کا انکشاف

ٹی بی کے خلاف ادویہ میں وٹامن سی کے مؤثر کردار کا انکشاف

نیویارک:(18 جون 2018) ٹی بی کے بروقت علاج کی صورت میں بھی یہ بیماری چھ ماہ سے کئی برس کی ادویہ باقاعدگی سے کھانے کے بعد ہی دور ہوتی ہے۔ اب انکشاف ہوا ہے کہ تپِ دق کے خلاف ادویہ کے ساتھ ساتھ اگر وٹامن سی کی مناسب خوراک کھائی جائے تو ادویہ کی تاثیر بڑھنے سے مریض کو بہت افاقہ ہوتا ہے۔

نیویارک میں واقع البرٹ آئن اسٹائن کالج آف میڈیسن کے ماہرین نے کہا ہے کہ وٹامن سی کے بہت سے طبی فوائد ہیں اور اب ایک نئے مطالعے سے معلوم ہوا ہےکہ وٹامن سی ٹی بی کی معروف دواؤں کی افادیت بڑھا دیتا ہے۔

اس کے علاوہ وٹامن سی اس مرض کی علاج کی مدت کو بھی کم کرتا ہے۔ ماہرین نے اسے چوہوں اور زندہ انسانی بافتوں (ٹشوز) پر آزمایا ہے۔ پہلے تجربے میں ٹی بی میں مبتلا چوہے لیے گئے اور انہیں تین طرح کی خوراکیں دی گئیں۔یہ خوراکیں صرف وٹامن سی، صرف ٹی بی کے خلاف ادویہ اور ٹی بی کی ادویہ کے ساتھ وٹامن سی بھی دیا گیا ۔ اس طرح 4 اور 6 ہفتوں بعد چوہوں کا معائنہ کیا گیا۔ ماہرین نے انکشاف کیا کہ جن چوہوں کو صرف وٹامن سی دیا گیا ان پر کوئی اثر نہیں ہوا، تاہم ٹی بی کی مشہور دوائیں، آری فیمبیسائن، اور آئسونائزڈ کو جب وٹامن سی کے ساتھ کھلایا گیا تو بغیر وٹامن سی والی دواؤں کے مقابلے میں اس نے سب سے تیزی سے ٹی بی کو ختم کیا اور اس کے بہترین نتائج سامنے آئے۔اسی طرح تجربہ گاہ میں ٹشوز پر بھی دواؤں کے ساتھ وٹامن سی کا بھرپور اثر ہوا اور مرض ٹھیک ہونے کی مدت ایک ہفتے تک جاپہنچی ۔ اس طرح یہ بات سامنے آئی کہ وٹامن سی ٹی بی کی دواؤں کو بہت مؤثر بنادیتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

جلد بیدار ہونے والی خواتین ڈپریشن سے دور رہتی ہیں

انفیکشنز شناخت کرنےکا انقلابی طریقہ ایجاد

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top