تازہ ترین
ووٹرز کی نظر میں کامیاب ترین جماعت کون سی؟؟

ووٹرز کی نظر میں کامیاب ترین جماعت کون سی؟؟

ویب ڈیسک: (24 جولائی،2018) عام انتخابات پر گہری نظر رکھنے والے تین اہم اداروں نے ملک کے تین حلقوں کے سروے کے دوران حیران کن نتائج حاصل کئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق گیلپ پاکستان، پلس کنسلٹنٹ اور آئی پی او آر نے ملک کے تین حلقوں میں سروے کیا، عوامی سطح پر کیے گئے رائے عامہ سرویز میں دیکھا گیا کہ پنجاب، خیبرپختونخوا اور سندھ میں ووٹرز کی ترجیحات میں تبدیلی نہیں آئی اور ووٹرز اس بار بھی ان ہی جماعتوں کو ووٹ دیں گے جنہیں 2013 کے انتخابات میں ووٹ دیا تھا۔

گیلپ کے مطابق مسلم لیگ (ن) سب سے آگے ہے تاہم اس کی مقبولیت میں کچھ کمی ہوئی ہے، دوسری جانب پلس (Pulse) کے سروے کے مطابق ملک بھر میں اب ووٹرز کی زیادہ تعداد پاکستان تحریک انصاف کو ووٹ دینے کو ترجیح دے رہی ہے۔سرویز میں یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ جن ووٹرز نے اب تک ووٹ دینے کے حوالے سے فیصلہ نہیں کیا، ان کی تعداد کافی زیادہ ہے اور سیاسی جماعتیں انہیں اپنی جانب مائل کرنے کی بھرپور کوشش کررہی ہیں۔

گیلپ کے پول میں کسی بھی جماعت کے حق میں ووٹ ڈالنے کے حوالے سے غیر یقینی کا شکار گروپ کا تناسب 20 فیصد تھا، 26 فیصد جواب دہندگان نے کہا کہ وہ ن لیگ کو جبکہ 25 فیصد کا کہنا تھا کہ وہ پی ٹی آئی کو ووٹ دیں گے۔پلس پول میں ابھی تک فیصلہ نہ کر سکنے والے ووٹرز کا تناسب 9 فیصد تھا جبکہ 30 فیصد نے کہا کہ وہ پی ٹی آئی کو، 27 فیصد نے ن لیگ کو جبکہ 17 فیصد نے کہا کہ وہ پی پی پی کو ووٹ دیں گے۔

ان پولز کے نتائج نومبر 2017 میں ہونے والے سرویز سے مختلف ہیں کیوں کہ اس کے بعد ملک میں کئی اہم سیاسی سرگرمیاں رونما ہوئیں۔ جنوری میں بلوچستان میں حکومت تبدیل ہوئی جبکہ معزز سپریم کورٹ کے سابق وزیراعظم نواز شریف سے متعلق تفصیلی فیصلے کی روشنی میں مارچ میں ہونے والے سینیٹ انتخابات میں (ن) لیگ حصہ نہیں لے پائی۔مئی کے آغاز پر جنوبی پنجاب سے تعلق رکھنے والے (ن) لیگی سیاست دانوں نے پارٹی چھوڑ دی اور تحریک انصاف میں شامل ہوگئے،اسی ماہ نواز شریف نے ایک انٹرویو دیا جسے کئی افراد نے متنازع قرار دیا۔

یہ بھی پڑھیے

عام انتخابات سے جمہوری اور سیاسی نظام مزید مستحکم ہوگا، صدر ممنون

مسلم لیگ (ن) عام انتخابات کا بائیکاٹ نہیں کرے گی،شاہد خاقان عباسی

Comments are closed.

Scroll To Top