تازہ ترین
وزیراعلیٰ پنجاب کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لئے درخواست دائر

وزیراعلیٰ پنجاب کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لئے درخواست دائر

لاہور: (22ستمبر،2017) لاہور ہائیکورٹ میں وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کے لیے درخواست دائر کر دی گئی ہے ، درخواست میں ہوم سیکرٹری اور وزرات داخلہ کو فریق بنایا گیا ہے، دوسری جانب سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ نہ ملنے پر پاکستان عوامی تحریک نے سول سیکرٹریٹ چوک پر مظاہرہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان عوامی تحریک نے وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل کرانے کے لئے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا ہے، پی اے ٹی کے وکیل اشتیاق چوہدری نے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی ہے جس میں الزام لگایا گیا ہے کہ شہباز شریف کا سانحہ ماڈل ٹاؤن میں اہم کردار ہے اور وہ اس سانحہ کے ملزم ہیں۔

پاکستان عوامی تحریک کی جانب سے دائر درخواست میں خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ شہباز شریف کسی بھی وقت بیرون ملک فرار ہوسکتے ہیں۔، درخواست گزار نے عدالت سے استدعا کی سانحہ ماڈل کے مقدمے کے فیصلے تک وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل کیا جائے تاکہ وہ بیرون ملک نہ جاسکیں۔

دوسری جانب عوامی تحریک کے کارکن خرم نواز گنڈا پور کی قیادت میں سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ لینے کیلئے سول سیکرٹریٹ چوک پہنچے۔ رپورٹ کی کاپی نہ ملنے پر عوامی تحریک کے کارکنوں نے سول سیکرٹریٹ چوک پر احتجاج کیا جو بعد ازں دھرنے میں تبدیل ہو گیا۔ عوامی تحریک کے مظاہرین کا کہنا تھا کہ ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ رپورٹ کی کاپی فراہم نہیں کر رہے، انکوائری رپورٹ ملنے تک یہاں سے نہیں جائیں گے۔اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عوامی تحریک کے رہنما خرم نواز گنڈا پور نے کہا کہ انٹراکورٹ اپیل دائرکرنے سے پہلے ہوم سیکرٹری کاپی دینے کا پابند ہے، لہٰذا جسٹس باقر نجفی کمیشن رپورٹ کی کاپی فراہم کی جائے۔ خرم نواز گنڈاپور کا مزید کہنا تھا کہ رپورٹ آنے پر وزیراعلیٰ اور رانا ثناء اللہ کا کردار سامنے آئے گا۔ سیکرٹری داخلہ کو جسٹس باقر نجی کمیشن رپورٹ کی کاپی لینے کی درخواست دیں گے۔

یہ بھی پڑھئے

لاہور: سانحہ ماڈل ٹاؤن، شہبازشریف نےتاریخ کا بدترین قتل عام کروایا، طاہرالقادری

لاہور ہائی کورٹ کا سانحہ ماڈل ٹاؤن انکوائری رپورٹ منظرعام پر لانے کا حکم

 

Comments are closed.

Scroll To Top