تازہ ترین
والدہ کی صحت پہلی ترجیح ہے، مریم نواز

والدہ کی صحت پہلی ترجیح ہے، مریم نواز

لندن: (25 جون 2018) رہنما مسلم لیگ (ن) مریم نواز نے واضح کیا ہے کہ جیسے ہی والدہ کی طیبعت سنبھلی، پاکستان واپس آجائیںگے۔

تفصیلات کے مطابق ہارلے اسٹریٹ کلینک میں والدہ کی عیادت کے بعد میڈیا سے مختصر گفتگو کرتے ہوئے رہنما مسلم لیگ (ن) مریم نواز نے کہا کہ انفیکشن کی وجہ سے والدہ کی صحت میں بہتری کاعمل رک گیا جس کے باعث انہیں ہوش نہیں آیا ہے۔

ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

ایک سوال کے جواب پر مریم نواز کا کہنا تھا کہ ہماری سب سے پہلی ترجیح والدہ کی صحت ہے، ابھی سیاست کے بارے میں نہیں سوچ رہے،ہم مقدمات سے بھاگنے والے نہیں بیگم کلثوم کی صحت بہترہونے پرمیاں صاحب فوراًواپس آئیں گے۔

میڈیا سے گفتگو میں مریم نواز نے کہا کہ میری قوم سے دعاؤں کی اپیل ہے کہ بیگم کلثوم نواز کی صحت یابی کے لئے دعا کریں۔

اس سے قبل گذشتہ روز لندن میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ کلثوم نواز کی بیماری کے باعث فی الحال الیکشن مہم میں حصہ لینا ممکن نہیں ہے۔ وہ میری اہلیہ ہیں اور اس حوالے سے کچھ میر ے بھی فرائض ہیں جو میں ادا کررہا ہوں۔
انہوں نے کہا کہ کلثوم نواز کو انفیکشن ہوگیا ہے جس کے باعث وہ بخار میں مبتلا ہیں۔ نواز شریف نے مزید کہا کہ جو پروپیگنڈا کر رہے ہیں وہ جانیں اور ان کا کام جانے۔

دوسری جانب گذشتہ روز بھی لندن کے ہارلے اسٹریٹ کلینک میں کلثوم نواز کی عیادت کیلئے پہنچنے پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا تھا کہ ابھی والدہ ہوش میں نہیں ہیں۔

یہ ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

انہوں نے کہا کہ وینٹی لیشن کم کرنے پر والدہ ردعمل ظاہر کرتی ہیں اور پھر کچھ نہ کچھ ایسا ہوجاتا ہے کہ وینٹی لیشن کا لیول بڑھانا پڑتا ہے۔

مریم نواز نے مزید کہا کہ ایک دو مرتبہ ایسا ہوا ہے کہ میں نے والدہ کو آواز دی تو انہوں نے کچھ حرکت کی تاہم ڈاکٹروں سے جب ان کی طبیعت کے بارے میں پوچھا جاتا ہے تو وہ واضح جواب نہیں دیتے۔یاد رہے کہ کینسر کے مرض میں مبتلا بیگم کلثوم نواز لندن کے ہارلے اسٹریٹ کلینک میں گزشتہ کئی ماہ سے زیرعلاج ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

اسلام آباد: پارلیمانی بورڈ نے مریم نواز کو ٹکٹ دینے کی منظوری دےدی

ابھی پاکستان جانے کا فیصلہ نہیں کیا، مریم نواز

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top