تازہ ترین
نئی حلقہ بندیوں سے متعلق بل آج بھی پیش نہ کیا جاسکا

نئی حلقہ بندیوں سے متعلق بل آج بھی پیش نہ کیا جاسکا

اسلام آباد: (22 نومبر 2017) نئی حلقہ بندیوں سے متعلق بل سینیٹ آج بھی میں پیش نہ کیا جاسکا۔ اراکین کی کم تعداد کے باعث بل کی منظوری تیسری بار موخر کردی گئی ہے۔

چیئرمین رضا ربانی کی زیر صدارت سینیٹ کے اجلاس میں نئی حلقہ بندیوں سے متعلق بل ایجنڈے میں شامل ہونے کے باوجود ایوان میں پیش نہ کیا جاسکا۔ بل کی منظوری کیلئے حکومت کو دو تہائی اکثریت درکار تھی۔ تاہم حکومتی بینچز پر صرف 18 اور اپوزیشن بنچز پر صرف 12 ارکان موجود تھے، جس پر حکومت نے ترمیمی بل پیش نہیں کیا۔چیئرمین سینیٹ نے ریمارکس دیئے کہ انتخابات وقت پر منعقد ہونے چاہئیں۔ قائد ایوان اور قائد حزب اختلاف اپنا کردار ادا کریں۔

اپوزیشن لیڈر اعتزاز احسن نے کہا کہ آئندہ چند روز میں کسی نتیجہ پر پہنچ جائیں گے۔

اجلاس کے دوران سائبر کرائم ایکٹ پر عملدرآمد سے متعلق ششماہی رپورٹ ایوان میں پیش نہ کی جاسکی۔

اپوزیشن لیڈر اعتزاز احسن نے کہا کہ عملدرآمد رپورٹ ایوان میں پیش ہوگی تو جائزہ لیں گے۔ بعد ازاں سینیٹ کا اجلاس جمعہ کی صبح ساڑھے 10 بجے تک ملتوی کردیا گیا۔وزیراعظم نے پیپلز پارٹی کی اعلی قیادت سے ملاقات کی خواہش ظاہرکردیاس سے قبل وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے قائد حزب اختلاف خورشید شاہ سے ملاقات کے دوران قانون سازی کیلئے سینیٹ میں ساتھ دینے اور پیپلز پارٹی کی قیادت سے ملاقات کی درخواست کی۔

یہ بھی پڑھیے

قومی اسمبلی نے اپوزیشن کا بل مسترد کردیا

وزیراعظم نے پیپلز پارٹی کی اعلی قیادت سے ملاقات کی خواہش ظاہرکردی

 

Comments are closed.

Scroll To Top