تازہ ترین
مبینہ انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کیلئے 30 رکنی پارلیمانی کمیٹی قائم

مبینہ انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کیلئے 30 رکنی پارلیمانی کمیٹی قائم

اسلام آباد: (15 اکتوبر 2018) دھاندلی کے الزامات کی تحقیقات کیلئے 30 رکنی پارلیمانی کمیٹی قائم کردی گئی ہے۔ کمیٹی 20 اراکین قومی اسمبلی اور 10 سینیٹر شامل ہوں گے۔

حکومت نے مبینہ انتخابی دھاندلی کی تحقیقات کیلئے 30 رکنی پارلیمانی کمیٹی قائم کردی ہے جس میں 20 ارکان قومی اسمبلی اور 10 سینیٹرز شامل ہوں گے۔ کمیٹی میں حکومت اور اپوزیشن کو برابر نمائندگی دی گئی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیر دفاع پرویز خٹک پارلیمانی کمیٹی کے سربراہ ہوسکتے ہیں تاہم سربراہ کا باضابطہ فیصلہ اور ٹی او آرز پہلے اجلاس میں طے کیے جائیں گے۔پارلیمانی کمیٹی میں پرویز خٹک، شیریں مزاری، ،شفقت محمود، علی محمد خان، عامر ڈوگر، اعظم سواتی، فروغ نسیم، محمد علی سیف، خوش بخت شجاعت، نعمان وزیر، رضا ربانی، جاوید عباسی، رحمان ملک اور عثمان کاکڑ کمیٹی کا حصہ ہوں گے۔

اس کے علاوہ کلثوم پروین، خورشید شاہ، پرویز اشرف، نوید قمر، اختر مینگل، مولانا عبدالواسع، احسن اقبال، رانا ثناء اللہ، رانا تنویر اور مرتضیٰ عباسی بھی ٹیم میں شامل ہوں گے۔

یہ بھی پڑھیے

دھاندلی کی تحقیقات کیلئے خصوصی کمیٹی میں سینیٹ ارکان کی شمولیت کی تحریک منظور

وزیراعظم نے انتخابی دھاندلی تحقیقاتی کمیٹی کی منظوری دے دی

 

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top