تازہ ترین
غوطہ پر روسی اور شامی افواج کی بمباری جاری

غوطہ پر روسی اور شامی افواج کی بمباری جاری

دمشق: (12 مارچ 2018) شام کے شہر غوطہ میں روسی اور شامی افواج کی بمباری جاری ہے۔ اقوام متحدہ میں امریکی مندوب نکی ہیلی نے اجلاس کے دوران دھمکی دی کہ سلامتی کونسل نے کیمیائی حملے پر اسد کی فوج کے خلاف کارروائی نہ کی تو امریکا خود حملے کرے گا۔

شام کی صورتحال پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا اجلاس نیویارک میں ہوا۔ کویت سمیت اکثر ارکان نے غوطہ میں جنگ بندی پر عملدرآمد کا مطالبہ کیا۔ امریکی مندوب نکی ہیلی نے کہاکہ غوطہ میں تیس روز کی جنگ بندی کی قرارداد کی روس نے خود حمایت کی لیکن شام اور روس داعش کے خلاف کارروائی کے بہانے شہریوں کو کیمیائی حملوں کا نشانہ بنارہاہے۔

امریکی مندوب نکی ہیلی  نے کہاکہ امریکا انتظار کررہاہے کہ عالمی برادری شام کے صدر بشارالاسد کے خلاف کیا کارروائی کرتی ہے۔ بصورت دیگر ماضی کی طرح امریکا خود شامی فوج اور کیمیائی ہتھیاروں کو نشانہ بنائےگا۔

اس سے پہلے شام کی صورتحال پر اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتیرس نے بریفنگ دی بشارالاسد سے اپیل کی وہ اپنے ہی شہریوں پر کیمیائی حملے بند کردے۔ شام کے مطابق مشرقی غوطہ سے شہریوں کا ایک قافلہ نکل گیا جبکہ دوسرا نکلنے کی تیاری کر رہا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

شام : غوطہ میں روسی اور شامی افواج کی بمباری جاری، ہزار سے زائد جاں بحق

شامی افواج کےغوطہ پرکیمیائی حملے، خواتین اوربچوں سمیت 50 سے زائدجاں بحق

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top