تازہ ترین
شمالی علاقہ جات میں کڑاکے کی سردی

شمالی علاقہ جات میں کڑاکے کی سردی

ویب ڈیسک:(12 اکتوبر 2018) پاکستان کے حسین ترین علاقوں شمالی علاقہ جات میں ماہ اکتوبر میں جاڑے نے ڈیرے ڈال لیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق شمالی علاقہ جات سمیت استور اور دیامر برف سے ڈھک گئے ہیں۔ ادھر وادی کاغان، ناران اور شوگراں پر بھی سفید چادر تن گئی ہے جبکہ خوشی سے نہال سیاحوں کو بابوسرٹاپ نہ جانے کی ہدایت کی گئی ہے۔ملک کے خوبصورت سیاحتی علاقے اور بلند ترین مقام بابو سر ٹاپ پر پانچ فٹ تک برف پڑچکی ہے۔ جس کے بعد انتظامیہ نے بابوسر ٹاپ کو ہرقسم کی ٹریفک کے لئے بند کردیا۔ انتظامیہ نے سیاحوں کو بھی سختی سے ہدایت کی ہے کہ بابو سرٹاپ جانے سے گریز کیا جائے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق بابوسر ٹاپ پر گذشتہ چوبیس گھنٹے کے دوران درجہ حرارت منفی 16 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

مانسہرہ کے تفریحی علاقوں میں قبل از وقت برفباری سے موسم انتہائی سرد ہوگیا، برفباری سے سیاحتی سرگرمیاں بھی ماند پڑگئی ہیں۔ گذشتہ تین دن کے دوران وادی کاغان، ناران اور شوگراں میں شدید برف باری ریکارڈ کی گئی ہے۔ادھر کوئٹہ میں بھی میں بھیموسم نے اچانک کروٹ بدلی ہے ۔ شہر اور گرد ونواح میں شدید سردی نے شہریوں کے دانت بجادیے ہیں۔

ملک بھر کی طرح فورٹ عباس میں بھی موسم نے تیور بدلنے شروع کردئیے ہیں۔ رات کو خنکی کا احساس جبکہ صبح کے اوقات میں دھندنے اپنے ڈیرے جمانے شروع کر دئیے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

ملک میں عمومی طور پر موسم خشک رہیگا، کچھ علاقوں میں بارش کا امکان

کراچی میں مزید دو روز گرمی کی لہر جاری رہے گی، محکمہ موسمیات

Comments are closed.

Scroll To Top