تازہ ترین
شلپا شیٹھی کو آسٹریلیا میں رنگت کی وجہ سے امتیازی سلوک کا سامنا

شلپا شیٹھی کو آسٹریلیا میں رنگت کی وجہ سے امتیازی سلوک کا سامنا

ویب ڈیسک:(24 ستمبر 2018) بالی ووڈ اداکارہ شلپا شیٹھی جو گزشتہ 4 سال سے کسی فلم میں نظر نہیں آئیں، تاہم وہ مسلسل خبروں میں رہتی ہیں۔ اس بار شلپا شیٹھی اپنے ساتھ آسٹریلیا میں ہونے والے مبینہ امتیازی سلوک کی وجہ سے خبروں میں ہیں۔

شلپا شیٹھی نے اپنی انسٹاگرام پوسٹ کے ذریعے دعویٰ کیا کہ انہیں سڈنی سے میلبورن کے لیے سفر کرتے وقت ایئر پورٹ پر نجی ایئرلائن ‘کنٹاس’ کے عملے کی جانب سے نسلی امتیاز کا نشانہ بنایا گیا۔

اداکارہ نے ایئرپورٹ پر سفری بیگ کے ساتھ اپنی تصویر شیئر کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ انہیں ایئرلائن کے عملے نے ‘گندمی رنگت’ کی وجہ سے نسلی امتیاز کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ایسے افراد سے اسی طریقے سے ہی بات کرنا درست ہے۔

 

View this post on Instagram

 

Subject: #Qantas airways @qantas This should get your attention! Travelling from Sydney to Melbourne and at the check in counter met a grumpy #Mel ( that’s her name)who decided it was “OK” to speak curtly to “US” ( Brown people!!) travelling together ,I was flying business and had 2 bags (my allowance)and she insisted and decided my half empty Duffel bag was oversized( to check in!!) So she sent us to check it in at the other counter dealing with “Oversized luggage” ..there a Polite lady(yes this one was) said ..”this ISN’T an oversized bag, pls check this in manually if u can at another counter” ( all this happening while the counter is going to shut in 5 mins) As the manual check in wasn’t going thru for 5 mins( we tried) I went upto #Mel and requested her to put the bag thru as her colleague said it wasn’t an oversized bag.. She refused again.. Just being adamant especially when I told her this is causing a lot of inconvenience .. We had no time to waste so we ran to the oversized baggage counter and requested her to put the bag through which she did after I told her that #Rude #Mel had issues !!!…. to which another colleague joined in an reiterated my duffle wasn’t oversized and could’ve easily been checked in. The point is .. This piece is only for #qantas airlines to know and take cognisance .. that their staff must be taught to be helpful and TONE can’t change with preference to #COLOUR .”WE” are NOT #pushovers and they MUST know that being #callous and #Rude will NOT BE TOLERATED 🙏✋🏼💔. Ps: Please tell me if that bag in the picture is oversized??!! @australia @visitmelbourne @travel #truthmustbetold #bemused #uncalledfor #standup #equality #whatswrongisnotright #instapic #travelwoes #shocking #nightmare #notcool

A post shared by Shilpa Shetty Kundra (@theshilpashetty) on

شلپا شیٹھی کے مطابق وہ بزنس کلاس سے سفر کر رہی تھیں، لیکن جب وہ طیارے میں سوار ہونے کے لیے پہنچیں تو ایئرلائن کی ‘میل’ نامی ملازمہ نے انہیں ‘گندمی رنگت’ کا کہ کر ان کا آدھے سے زیادہ خالی بیگ چیک کرنے سے انکار کرتے ہوئے دوسرے کاؤنٹر پر بھیجا۔

اداکارہ کے مطابق جب وہ دوسرے کاؤنٹر پر پہنچیں تو انہیں بتایا گیا کہ اس کاؤنٹر پر بھاری اور بھرے ہوئے بیگ چیک ہوتے ہیں، آپ کا بیگ آدھا خالی ہے، اس لیے واپس اسی کاؤنٹر سے سامان چیک کروائیں۔

شلپا شیٹھی نے بتایا کہ انہوں نے واپس جاکر میل نامی ملازمہ کو بتایا، تاہم انہوں نے ایک بار پھر سامان چیک کرنے سے انکار کردیا، جس کے بعد انہوں نے بڑی کوششوں سے منتیں کرکے ایک دوسرے کاؤنٹر سے سامان چیک کروایا اور انہیں عملے سے رویے سے بھی آگاہ کیا۔

اداکارہ نے اپنی لمبی چوڑی پوسٹ میں واضح کیا کہ یہ رویہ صرف کنٹاس ایئرلائن کے عملے کی جانب سے کیا گیا۔

اداکارہ نے اپنے ساتھ ہونے والے اس سلوک کی تفصیل بتاتے ہوئے ایئر پورٹ انتظامیہ، ایئرلائن انتظامیہ اور آسٹریلوی حکام سے گزارش کی کہ وہ اس کا نوٹس لیں۔

تاہم بھارتی اداکارہ کی پوسٹ سے خود بھارتی افراد نے ہی اتفاق نہیں کیا اور اداکارہ کو بتایا کہ عملے نے اپنے اصولوں کے مطابق کام کیا۔

شلپا شیٹھی کی پوسٹ پر کئی بھارتی افراد نے ان کے دعوے سے اختلاف کیا اور کہا کہ ہوسکتا ہے کہ اداکارہ کو سمجھنے میں غلطی ہوئی ہو۔

یہ بھی پڑھیے

پیپلزپارٹی نے معروف فنکار قیصر نظامانی کو این اے 247 سے پارٹی ٹکٹ دے دیا

اداکار دلیپ کمار کو 2 ہفتوں بعد اسپتال سے ڈسچارج کر دیا گیا

Spread the love

Comments are closed.

Scroll To Top