تازہ ترین
شریف خاندان کیلئے نئے نئے قانون بنائے جارہے ہیں: انوشہ رحمان

شریف خاندان کیلئے نئے نئے قانون بنائے جارہے ہیں: انوشہ رحمان

اسلام آباد: (14 ستمبر 2017) وزیر مملکت آئی ٹی انوشہ رحمن کہا کہنا ہے کہ شریف خاندان کے لئے نئے نئے قوانین بنائے جا رہے ہیں۔ بیرسٹر ظفر اللہ نے کہا ہے کہ نواز شریف کو ضابطے اور قانون کے تحت نااہل کیا گیا، جے ائی ٹی کی رپورٹیں نامکمل تھیں۔

سپریم کورٹ میں پاناما نظر ثانی کیس کی سماعت ہوئی ہے۔ سماعت کے بعد سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر مملکت برائے آئی ٹی انوشہ رحمان نے کہا کہ ایسا لگ رہا ہے کہ شریف خاندان کے لئے نئے قوانین بنائے گئے ہیں، عوامی نمائندے کو طے شدہ طریقے کے بغیر ہٹانے کی مثالیں قائم نہ کی جائیں۔

ویڈیو دیکھنے کیلئے پلے کا بٹن دبائیے

انوشہ رحمان نے کہا کہ ملک میں انصاف کا محور سپریم کورٹ ہے، امید ہے اعلٰی عدلیہ آئین اور قانون کے تناظر میں ہی کیس کا فیصلہ کرے گی۔ وزیر اعظم کے معاون خصوصی بیرسٹر ظفر اللہ نے کہا کہ تاریخ میں کبھی فیصلہ سنانے والے جج کو نگران نہیں بنایا گیا، مانیٹرنگ جج کا فیصلہ ایک سوالیہ نشان ہے، کیس میں انصاف ہوتا نظر نہیں آرہا ہے۔

یہ بھی پڑھئے

نظرثانی کیس میں نواز شریف اور اسحق ڈار کے وکلا کے دلائل مکمل، سماعت کل تک ملتوی

سابق وزیراعظم اور ان کے بیٹوں کو عزیزیہ اسٹیل ملز،لندن فلیٹس کے ریفرنس میں سمن جاری

Comments are closed.

Scroll To Top