تازہ ترین
سندھ ہائیکورٹ میں لاپتہ افراد سے متعلق کیس کی سماعت، رپورٹس غیر تسلی بخش قرار

سندھ ہائیکورٹ میں لاپتہ افراد سے متعلق کیس کی سماعت، رپورٹس غیر تسلی بخش قرار

کراچی:(13 دسمبر 2018) سندھ ہائی کورٹ نے لاپتہ افراد کے کیس میں صوبائی ٹاسک فورس اور جے آئی ٹی رپورٹس کو غیرتسلی بخش قرار دے دیا ۔

سندھ ہائی کورٹ میں 70 سے زائد لاپتا افرادکی بازیابی سے متعلق درخواستوں کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے پولیس رپورٹ پر بھی عدم اطمینان کا اظہار کیا۔ عدالت نے سیکریٹری داخلہ سندھ، سربراہ جے آئی ٹی اور پی ٹی ایف کو ذاتی حیثیت میں طلب کرلیا۔

جسٹس نعمت اللہ پھلپھوٹو نے ریمارکس دیئے کہ پولیس ہمیشہ روایتی رپورٹس پیش کرتی ہے،درجنوں اجلاس کے بعد بھی جے آئی ٹی اور پی ٹی ایف کی کارکردگی زیرو ہے۔جسٹس کے کے آغا نے ریمارکس دیئے کہ صوبائی ٹاسک فورس اور جے آئی ٹی عدالت کو حقائق سے آگاہ نہیں کررہی۔

پولیس رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ لاپتا شہری شعیب غفران ڈیرہ غازی خان میں پولیس مقابلے میں مارا گیا ہے۔جسٹس کے کے آغا نے ریمارکس دیے کہ پی ٹی ایف کے مطابق شعیب غفران کا سراغ نہیں ملا۔ عدالت نے حکم دیا کہ جے آئی ٹی اور پی ٹی ایف تمام کیسوں کی الگ الگ جانچ پڑتال کریں۔

یہ بھی پڑھیے

میٹرو کرپشن کیس: نیب تیسری بار بھی ریفرنس پیش نہ کرسکا

چیف جسٹس کا تمام نجی اسکولوں کی فیسوں میں کمی کا حکم

Comments are closed.

Scroll To Top